ٹاؤن ہسپتال رحیم آباد‘ غلط انجکشن سے 7سالہ بچی جاں بحق‘ ورثا کا مظاہرہ

  ٹاؤن ہسپتال رحیم آباد‘ غلط انجکشن سے 7سالہ بچی جاں بحق‘ ورثا کا مظاہرہ

  



ملتان (وقائع نگار)) گورنمنٹ ٹاون ہسپتال رحیم آباد میں ڈاکٹروں اور عملے کی مبینہ غفلت انجکشن لگانے سے سات سالہ بچی دم توڑ گئی۔جبکہ ورثاء نے ہمایوں روڈ پر ٹائر جلاکر ٹریفک بلاک کردی۔اور ہسپتال کا گھیراؤ کیا۔محکمہ صحت کے ٹیم نے مظاہرین سے مذاکرات کرنے کے بعد انکوائری کی دہانی پر مظاہرہ ختم کروا دیا ہے۔معلوم ہوا ہے گورنمنٹ ٹاون ہسپتال رحیم آباد میں تقریبا تین روز قبل رکشہ ڈرائیور محمد ناصر اپنی سات سالہ بچی مناہل کو تیز بخار ہونے پر لے آیا۔جہاں ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹر نے چیک کے بعد اسکو انجکشن لگانا (بقیہ نمبر40صفحہ12پر)

تجویز کیا۔مگر مناہل کی والدہ نے بچی کمزور ہونے کی وجہ سے انجکشن لگانے سے انکار کیا۔مگر متعلقہ نرس نے والدہ کی ایک نہ سنی۔اور بچی کو انجکشن لگا دیا۔جس کے بعد مناہل کا رنگ نیلا پڑ گیا اور ساتھ ہی سانس لینے میں اسکو دشواری ہونے لگی۔اور وہ دم توڑ گئی۔جس پر جاں بحق ہونے والی مناہل کے ورثاء نے گزشتہ روز ہمایوں روڈ پر احتجاج کیا۔ٹریفک بلاک کردی۔رحیم آباد ٹاؤن ہسپتال کا گھیراؤ کیا۔اطلاع پاکر مقامی پولیس اور محکمہ صحت کی ٹیمیں بھی موقع پر پہنچ گئی۔جہنوں نے کاروائی کی یقین دہانی پر مظاہرین کو منتشر کیا۔جبکہ دوسری جانب محکمہ صحت ملتان کی ٹیم نے اپنی ابتدائی رپورٹ سی ای او ہیلتھ کو پیش کردی ہے۔

مظاہرہ

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...