169مقدمات دفن‘ چالان سینٹ اپ نہ ہونے پر آر پی او کا نوٹس

      169مقدمات دفن‘ چالان سینٹ اپ نہ ہونے پر آر پی او کا نوٹس

  



ملتان (وقائع نگار)ضلع بھر میں تفتیشی افسران کی من مانیاں بڑھ گئیں۔لڑائی جھگڑوں کے 169 مقدمات یکسو اور چالان بروقت سینٹ اپ نہ ہونے بارے انکشاف ہوا ہے۔جس پر آر پی او نے سخت نوٹس لیتے ہوئے ملتان پولیس افسران کی کارکردگی پر بھڑک اٹھے ہیں۔ذرائع سے معلوم ہوا ہے ضلع بھر کے ریکارڈ منجمنٹ سسٹم سال 2019 کے تحت دوران انسپکشن یہ بات سامنے آئی ہے کہ تفتیشی(بقیہ نمبر15صفحہ12پر)

افسران نے 21 دنوں کے اندر لڑائی جھگڑوں کے 169 مقدمات کو یکسو کرکے چالان کو عدالت میں سینٹ اپ کروانا تھا۔جس پر تفتیشی افسران نے عمل نہیں کیا۔اورمقدمات یونہی پینڈنگ چھوڑے ہوئے ہیں۔جسکی وجہ سے عدالت کو مقدمات کے فیصلے کرنے میں مشکلات کا سامنا ہے۔اس حوالے سے ریجنل پولیس آفسیر وسیم احمد خان سیال نے سخت نوٹس لیتے ہوئے ضلعی پولیس افسران پر برہمی کا اظہار کیا ہے۔اور فوری مقدمات یکسو کرکے چالان سینٹ اپ کروانے کی ہدایت کی ہے۔احکامات نہ ماننے کی صورت میں ذمے دار کے خلاف محکمانہ کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔واضح رہے تھانہ کینٹ میں (5).جلیل آباد میں (6) چہلیک میں (4)مظفر آباد میں (7)۔قطب پور میں (9)۔منتاز آباد (4)شاہ شمس (6)۔گلں گشت (5). بی زیڈ (4).صدر (6) الپہ (28)۔نیو ملتان ایک۔شاہ رکن عالم دو۔ سیتل ماڑی دو۔لوہاری گیٹ(1)۔ مخدوم رشید (17) قدر پور راں (11)۔بدھلہ اور بستی ملوک (8)(8).شجاع آباد سٹی (7) شجاع آباد صدر (12)راجہ رام (5) جلال پور سٹی میں (4) اور صدر میں (12) مقدمات نامکمل ہیں۔جن کو سینٹ اپ کروانا ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...