اپوزیشن کووزیراعظم سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کرنے سےپہلے خود استعفے دینے چاہئیں: مجیب الرحمان شامی

اپوزیشن کووزیراعظم سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کرنے سےپہلے خود استعفے دینے ...
اپوزیشن کووزیراعظم سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کرنے سےپہلے خود استعفے دینے چاہئیں: مجیب الرحمان شامی

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن)سینئر تجزیہ کار مجیب الرحمان شامی نے کہاہے کہ وزیر اعظم سے استعفے کا مطالبہ کرنے پہلے اپوزیشن کوخود استعفے دینے چاہئے، مولانافضل الرحمان جو کچھ بھی کہتے رہے ہوں یا عمران خان کچھ بھی کرتے رہے ہوں ، وہ ہمارے لئے کوئی سندنہیں ہے ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”اختلافی نوٹ“میں گفتگو کرتے ہوئے مجیب الرحمان نے کہا کہ استعفے کا مطالبہ کرنے پہلے اپوزیشن کوخود استعفے دینے چاہئے ، ایک پارٹی کی ایک صوبے میں حکومت ہے اوردوسرے صاحب قائد حزب اختلاف بنے ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان نے جب استعفے دیئے تھے تو ان کی جانب سے کم از کم اتنا تو کیاگیا تھا کہ تحریک انصاف کے ارکان نے استعفے دیدیئے تھے ،یہ الگ بات ہے کہ سپیکر قومی اسمبلی نے ان کے استعفے قبول نہیں کئے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ کیسے ہوسکتاہے کہ آپ خود کوپارلیمنٹ میں بیٹھے ہوئے ہیں اور قائد ایوان سے کہیں کہ استعفیٰ دے؟

مجیب الرحمان شامی کا کہنا تھا کہ مولانافضل الرحمان جو کچھ بھی کہتے رہے ہوں یا عمران خان کچھ بھی کرتے رہے ہوں ، وہ ہمارے لئے کوئی سندنہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جب عمران خان دھرنا دیکر نواز شریف سے استعفے کا مطالبہ کررہے تھے تو میں شدت سے اختلاف کررہا تھا اور اب بھی جو ہورہاہے ، اس سے شدت سے اختلاف کروں گا ۔ انہوں نے کہا کہ اس طرح حکومتیں نہیں چلتیں ، ہماری وفاداری مولانافضل الرحمان یا عمران خان کے ساتھ نہیں ہے بلکہ ہماری وفادار ی ملک کے ساتھ ہے ۔

مزید : قومی


loading...