پاکستانی اور ہندوستانی انگیریزوں سے بہتر انگریزی دان ہیں

پاکستانی اور ہندوستانی انگیریزوں سے بہتر انگریزی دان ہیں
پاکستانی اور ہندوستانی انگیریزوں سے بہتر انگریزی دان ہیں

  

لندن (بیورورپورٹ)ایک سرو ے رپورٹ کے مطابق برطانوی یورنیورسٹیوں میں زیر تعلیم غیر ملکی طالب علم برطانوی شہریوں سے بہتر انگلش بولتے اور لکھتے ہیں۔ ایک رپورٹ کے مطابق برطانوی طالب علموں کو گرائمر کا کوئی خیال نہیں ہوتا اور وہ سوالات کے جواب دیتے ہوئے الفاظ کا مفہوم ہی تبدیل کر دیتے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق اکثر برطانوی طلباء Their کو There لکھتے ہیں جبکہ انگلش برطانوی شہریوں کی مادری زبان ہے اور وہ اس مادری زبان کے خبط میں انگلش غلط لکھتے اور بولتے ہیں۔ کوئی لیٹر یا درخواست لکھتے ہوئے فل سٹاپ اور کاما ‘ کا استعمال نہیں کرتے جس سے ایسے محسوس ہوتا ہے کہ جیسے اوپر سے لیکر نیچے تک ایک ہی قصہ بیان کیا جا رہا ہے۔ بہترین انگلش لکھنے اور بولنے میں ہندوستان نمبر ون دوسرے نمبر پر پاکستانی طلباءہیں جو نہ صرف برطانوی طالب علموں سے بہتر انگلش لکھتے اور بولتے ہیں بلکہ گرائمر کا بھی پورا خیال رکھتے ہیں ۔

مزید :

ادب وثقافت -