2011کے جلسے کے بعد پارٹی کو 300کروڑ میں خریدنے کی کوشش کی گئی ،عمران خان کا انکشاف

2011کے جلسے کے بعد پارٹی کو 300کروڑ میں خریدنے کی کوشش کی گئی ،عمران خان کا ...

  

 اسلام آباد (خصوصی رپورٹ ) تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کہتے ہیں اسمبلیوں میں چور اور قاتل بیٹھے ہیں ملک میں غریب کیلئے کوئی قانون نہیں نئے پاکستان میں کوئی تفریق نہیں ہو گی۔ میچ جیت چکے ہیں اگلی حکومت تحریک انصاف کی ہو گی۔ دھرنے کے شرکاءسے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ سبھی انہیں غیر سیاسی، پاگل اور دیوانہ کہتے ہیں لیکن نیا پاکستان بنائیں گے میچ جیت چکے ہیں اگلی حکومت تحریک انصاف کی ہو گی۔ چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ اسمبلیوں میں چور اور قاتل بیٹھے ہیں ملک میں غریب کیلئے کوئی قانون نہیں۔ قرضے لیکر ہم نے خود ذلت خریدی ،پاکستانیوں کو کسی کی نقل کرنے کے بجائے خود اچھا بننا ہے۔ عمران خان نے وزیراعظم پر ایک خلیجی ملک سے رقم لینے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ انہیں بھی پیش کش ہوئی تھی تاہم انہوں نے ٹھکرا دی۔عمران خان کا کہنا تھا کہ امیر شخص وہ ہے جو کسی صورت اپنے ضمیر کا سودا نہیں کرتا جبکہ بعض افراد کی جانب سے تحریک انصاف کے 30 اکتوبر 2011 کے جلسے کے بعد پارٹی کو 300 کروڑ روپے میں خریدنے کی کوشش کی گئی لیکن اس آفر کو ٹھکرا دیا گیا، قوم میرے ساتھ ہے تو کسی کی پرواہ نہیں ملک کو مثالی اسلامی ریاست بنا کر رہیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ماضی میں دوسروں کے کہنے پر اپنے لوگ مروائے گئے اور اس کام کی رقم وصول کی گئی لیکن آئندہ کوئی حکمران اس قسم کی حرکت نہیں کر پائے گا، تحریک انصاف کے دھرنوں نے قوم کو جگا دیا اور عوام جیت گئے اب اگلی حکومت تحریک انصاف کی ہوگی۔تحریک انصاف کے چیرمین کا کہنا تھا کہ ہم چاہتے ہیں کہ ملک میں دشمنوں کے ساتھ بھی انصاف ہونا چاہئے لیکن یہاں بدقسمتی سے انصاف کے حقدار کو بھی انصاف نہیں ملتا، “گو نواز گو” کا نعرہ اب نہیں رکے گا بلکہ وزیراعظم نواز شریف کے محافظ بھی گو نواز گو کا شور مچائیں گے،عوام میں تبدیلی کی ہوا چل پڑی ہے یہی سب سے بڑی کامیابی ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا میں بندوق کے زور پر، ڈرون سے حملہ کرکے یا بمباری سے راج نہیں کیا جاتا بلکہ اعلیٰ کردار کی حامل قومیں راج کرتی ہیں۔

مزید :

صفحہ اول -