ٹرانسپورٹ اور ریل کا پہیہ جام ،وزیر اعظم کومڈ ٹرم الیکشن کی طرف لانے کیلئے تحریک انصاف کی نئی حکمت عملی

ٹرانسپورٹ اور ریل کا پہیہ جام ،وزیر اعظم کومڈ ٹرم الیکشن کی طرف لانے کیلئے ...

  

لاہور(جاویداقبال)پاکستان تحریک انصاف نے حکومت کے گرد گھیرا مزید تنگ کرکے وزیراعظم کو مڈٹرم انتخابات پر” لانے “ کے لئے نئی حکمت عملی تیار کرلی ہے جس کے تحت حکومت کو نئی ڈیڈلائن دینے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے اس ڈیڈ لائن کو عبور کر نیکی صورت میں تحریک انصاف ملک کا پہیہ جام کرنے کی حکومت کو ڈیڈلائن دے گی اس میں ناکامی کی صورت میں پاکستان تحریک انصاف غیر سیاسی اداروں کو مداخلت پر مجبور کرنے کے لئے ملک کی تمام ریلوے لائنوں اور شاہراہوں پر تامرگ دھرنے دے دکر ملک کا نظام درہم برہم کردے گی تحریک انصاف کے انتہائی ذمہ دار ذرائع نے بتایا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف نے 2015کو ملک میں انتخابات کا سال قرار دے دیا ہے اور 2015میں ہر حال میں حکومت کے خامتے اور نئے انتخابات کرانے کے لئے ”ڈو اینڈ ڈائی “کے نام سے نئی حتمی شکل دینے کے لئے اجلاس شروع کردیئے ہیں اس حکمت عملی کے تحت پاکستان تحریک انصاف ملک کا پہیہ جام کرنے کی حکمت عملی تیار کررہی ہے جس کے تحت پی ٹی آئی ریلوے اور ٹرانسپورٹ کا پہیہ جام کرے گی ۔ہر ریلوے لائن اور اہم شاہراہوں پر دھرنے دینے کا پروگرام بنایا جارہا ہے جس کا مقصد حکومت کو ہرحال میں مفلوج کرنا ہے اور اس طریقہ کے تحت حکومت کے گرد گھیرا تنگ کرنا ہے ذرائع کا کہنا ہے کہ پہیہ جام اس انداز میں کیا جائے گا کہ غیر سیاسی ادارے مداخلت کرکے حکومت کو مجبور کریں کہ وہ وزیر اعظم سے کہیں کہ حالات درست کرنے کے لئے وہ مڈٹرم انتخابات کا اعلان کریں ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ اس سے قبل تحریک انصاف ملک کے بڑے شہروں میں اپنے احتجاجی جلسوں کا مرحلہ مکمل کرے گی جس کے تحت آخری جلسہ کوئٹہ میں کیا جائے گا جس فوری بعد تحریک انصاف وزیر اعظم کو دھاندلی کی آزادانہ تحقیقات ،الیکشن کمیشن کی تشکیل نو اور انتخابی قوانین میں ترامیم کی ڈیڈلائن دے گی اور ساتھ میں مڈٹرم انتخابات کرانے کا مطالبہ کرے گی مطالبات دی گئی تاریخ تک پورے نہ ہونے کی صورت میں تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان ملک میں پہیہ جام کرنے کی ڈیڈلائن جاری کرے گی اس ڈیڈ لائن کے اندر وزیراعظم نے نئے انتخابات نے نئے انتخابات کا اعان نہ کیا تو پی ٹی آئی ملک کا پہیہ جام کرنے کی ڈیڈ لائن دے گی جس کے تحت پورے ملک کا نظام مفلوج کردیا جائے گا یہ مرحلہ حکومت کے خاتمے اور نئے انتخابات کے اعلان پر ختم ہوگا ۔

مزید :

صفحہ آخر -