وہ بے شرم جوڑا جو 5 نوجوان گڑیوں کے ساتھ رہتاہے

وہ بے شرم جوڑا جو 5 نوجوان گڑیوں کے ساتھ رہتاہے
وہ بے شرم جوڑا جو 5 نوجوان گڑیوں کے ساتھ رہتاہے

  

لندن (نیوزڈیسک)مغربی معاشرے میں میا ں بیوی کے انتہائی ذاتی نوعیت کے تعلق کوتیسرے مرد یا عورت کی شمولیت سے رنگین بنانے کا رجحان تو عام ہے لیکن ڈیو اور شانا نامی جوڑے نے اس بے حیائی کو نیا رنگ دیتے ہوئے انسانی جسم کے سائز کی چارعدد جنسی گڑیوں اورایک عدد جنسی گڈے کو بھی اپنی خلوت کا حصہ بنا لیا ہے اور اس کے بارے میں ایک ڈاکو مینٹری بنا کر ٹی وی پر بھی پیش کر دی ۔

ڈیو کا کہنا ہے کہ اسے ہمیشہ سے سلیکون کی بنی ہوئی مصنوعی خواتین کا شوق تھا اور اس نے 20ہزار پاؤ نڈ (تقریباً33لاکھ پاکستانی روپے )خرچ کر کے چارعدد گڑیاں اپنے جنسی شوق کی خاطر تیار کراوئیں ۔جب بھی کوئی حقیقی خاتون اس کے اس شوق کے بارے میں جانتی تو اسے قطع تعلق کر لیتی لیکن پھر اسے شانا نامی خاتون مل گئی جو خو د بھی ایسی چیزوں کی شوقین تھی ۔

شانا نے زنانہ گڑیوں پر تو اعتراض نہیں کیا لیکن اس نے یہ فرمائش کر دی کہ اگر ڈیو کو زنانہ گڑیوں کی ضرورت ہے تو اس کے لیے مردانہ گڈا بھی ہونا چاہیے ۔ڈیو نے اس بات سے اتفاق کیا اور انہوں نے شانا کی پسند کے مطابق اعضاء اور  جسامت والا سلیکون کو گڈا بھی تیار کروالیا اور اب ان کے بیڈ روم میں یہ پانچ مصنوعی انسان بھی رات کے وقت موجود ہوتے ہیں ۔

ان کا کہنا ہے کہا اب وہ کسی حقیقی خاتون یا مرد کو بلائے بغیر ہی اپنی خلوت کے لمحات میں ورائٹی پیداکر لیتے ہیں ۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -