خاتون ڈاکٹروں کو بلیک میل کرنے کے مقدمے کی سماعت 10اکتوبر تک ملتوی

خاتون ڈاکٹروں کو بلیک میل کرنے کے مقدمے کی سماعت 10اکتوبر تک ملتوی

  

لاہور(نامہ نگار)انسداد دہشت گردی کی عدالت نے انٹر نیٹ کے ذریعے 200 سے زاہد میوہسپتال کی خاتون ڈاکٹروں کو بلیک میل کرنے کے مقدمے کی سماعت 10اکتوبر تک ملتوی کرتے ہوئے مزید گواہوں کو طلب کرلیا ہے ،عدالت میں ایک متاثرہ لیڈی ڈاکٹر (ن) نے گزشتہ روز اپنا بیان قلمبند کروادیا ہے ۔ فیس بک اور انٹر نیٹ کے ذریعے میوہسپتال کی 200سے زاہد نرسوں اور خاتون ڈاکٹروں کوبلیک میل کرنے کے الزام میں گرفتار عبدالوہاب علوی کے کیس کی سماعت انسداد دہشت گردی کی عدالت کے جج چودھری اعظم نے کی، عدالت میں ایک متاثرہ لیڈی ڈاکٹر (ن) نے اپنا بیان قلمبند کرایا لیڈی ڈاکٹر نے بیان دیتے ہوئے کہا کہ ملزم عبدالوہاب علوی فاطمہ جناح میڈیکل کالج میں آیا اس نے خود کو حساس ادارے کا افسر ظاہر کیا اور انکوائری کے نام پر اسے ڈرا دھمکا کر 15ہزار روپے ہتھیا لئے، بعد میں اس کو بلیک میل کرتا رہا۔ عدالت میں ہنگ ڈاکٹر ایسوسی ایشن کے سیکرٹری ڈاکٹر سلمان کاظمی نے عدالت کو بتایا ملزم کا موبائل ڈیٹا ریکارڈ کا حصہ ہے جبکہ ملزم سے میموری کارڈ اور لیپ ٹاپ بھی برآمد کئے جا چکے ہیں ۔

جنہیں پولیس عدالت میں پیش نہیں کررہی عدالت نے کیس کی مزید سماعت ملتوی کرتے ہوئے مزید سماعت 10اکتوبر تک ملتوی کردی آئندہ تاریخ پر مزید گواہوں کو طلب کرلیا ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -