مغلپورہ سرکل ، قتل کی وارداتوں میں اضافہ معمول بن گیا ، سوشل کرائم بھی بڑھ گیا

مغلپورہ سرکل ، قتل کی وارداتوں میں اضافہ معمول بن گیا ، سوشل کرائم بھی بڑھ ...
 مغلپورہ سرکل ، قتل کی وارداتوں میں اضافہ معمول بن گیا ، سوشل کرائم بھی بڑھ گیا

  

 لا ہور (اپنے کرا ئم ر پو رٹر سے) مغل پو ر ہ کے علاقہ میں جرا ئم بالخصو ص قتل کی وارتو ں میں اضا فہ معمو ل بن گیا ہے، گزشتہ ایک ماہ کے دورا ن مغل پو ر ہ سر کل میں 7سے زائد افرا د مو ت کے منہ میں جا چکے ہیں ۔صرف گزشتہ4روز میں مغل پو ر ہ میں دوافرا د کو قتل کردیا گیا جس میں ایک وقوعہ میں خاتون بھی قتل کی ملزمہ ہے ۔علاوہ ازیں اس سر کل میں سوشل کرا ئم بھی تشویشناک حد تک بڑھ چکا ہے ۔ ذرا ئع کا کہنا ہے کہ مغل پور ہ تھا نہ میں سوشل کرا ئم کی وجہ سے دو ایس ایچ اوبھی معطل ہو چکے ہیں ۔ تفصیلا ت کے مطا بق شالیما ر ، گجر پو ر ہ اور مغل پو ر ہ تھا نہ پر قائم مغل پو ر ہ سر کل جس میں کرا ئم کی شر ح میں تشویشناک حد تک اضا فہ ہوا ہے ۔ ذرا ئع کے مطا بق گزشتہ ایک ما ہ کے دورا ن مذ کو ر ہ سر کل میں 7سے زائد افرا د مختلف واقعا ت میں جا ن کی با زی ہا ر چکے ہیں ۔ گزشتہ چا ر روز میں قتل ہو نے والے واقعا ت میں مغل پو ر ہ چو بچہ پھا ٹک کا ر ہا ئشی 24سالہ وقاص قتل ہوا،اس کی دوروز قبل مقامی رہائشی چند افراد کے ساتھ معمولی با ت پر تلخ کلا می ہو ئی جس پر ر ضوان وغیر ہ نے طیش میں آ کر اس پر فائرنگ کر دی اور وقاص موقع پر ہی جاں بحق ہو گیا ۔پولیس نے جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے کر کے مقتول کی لاش کو پوسٹ مارٹم کے بعد ور ثا کے حوالے کردیا ۔پو لیس کا کہنا ہے کہ قتل کی د فعا ت کے تحت مقد مہ در ج کر لیا گیا ہے جلد ملزما ن کوگرفتا ر کر لیا جا ئے گا ۔ دوسری جا نب 4روز قبل مغلپورہ میں گھریلو تنازع پر خاتون نے کزن کو چھریاں مار کر قتل کردیا، پولیس نے موقع پر پہنچ کر ملزمہ کو گرفتار کر لیا۔پولیس کے مطابق مغلپورہ رام گڑھ کی رہائشی 40 سالہ رفعت بی بی کرائے کے مکان میں رہائش پذیر تھی۔اس کا کزن ارشد اس سے ملنے کے لیے آیا ہوا تھا۔ گھریلو معاملات پر جھگڑا ہونے پر رفعت نے طیش میں آکر ارشد کو چھریوں کے وار کر کے قتل کر دیا۔ پولیس نے جائے وقوعہ سے تمام شواہد اکھٹے کر لئے ہیں۔پولیس کا کہنا تھا کہ رفعت بی بی کے خلاف مقدمہ درج کر کے تحقیقات کا آغاز کردیاگیا ہے ۔ذرا ئع کا کہنا ہے کہ مغل پو ر ہ سر کل میں سوشل کرا ئم میں اضا فہ ہو اہے ۔ ذرا ئع کے مطا بق چند ما ہ قبل ایک ایس ایچ او شہا ز جوئے کے اڈے پر ر یڈ کر نے گیا تو ملزما ن خر م بٹ وغیر ہ نے اسے تشد د کا نشانہ بنا یا اور کہا کہ تمہارے نا م پر تمہارا کا ر خا ص ہم سے ہفتہ لے جا تا ہے اور تم ر یڈ کر نے آگئے ہو۔ ذرائع کے مطا بق اعلی ٰ حکام کے نو ٹس لینے پر مذکو ر ہ ایس ایچ اوکو تھا نہ مغل پو ر ہ سے معطل کردیا گیا ۔ ایسا ہی ایک اور واقعہ مغل پو ر ہ میں پیش آیا جہا ں عدنا ن شیخ ایس ایچ او تھا، اس نے اعلی حکام کے کہنے پر ایک جوئے خانہ پر ر یڈ کی اور مر کزی ملزم کو مبینہ طو ر پر بھا ر ی رشوت لے کرچھوڑ د یا ۔اعلی ٰ پو لیس حکام کے علم میں با ت آئی تو مذکو ر ہ ایس ایچ او کو معطل کردیا گیا ۔ ذرا ئع کا یہ بھی کہنا ہے کہ ایک ما ہ کے دورا ن قتل کی واردتو ں میں اضا فہ کے باوجود انویسٹی گیشن پو لیس ایک مقد مہ کے علاوہ کسی ملزم کو گرفتا ر نہ کر سکی ہے ۔ اس حوالے سے مغل پو ر ہ سر کل کے ڈ ی ایس پی عثما ن حیدر کا کہنا تھا کہ قتل کی وارتوں میں ملزما ن کو ٹر یس کیا گیا ہے جبکہ سوشل کرا ئم پر بھی قابو پا یا گیا ہے ۔

مزید :

علاقائی -