ماہ ستمبر میں ایک لاکھ 30ہزارایمرجنسی متاثرین کو ریسکیوکیا،رضوان نصیر

ماہ ستمبر میں ایک لاکھ 30ہزارایمرجنسی متاثرین کو ریسکیوکیا،رضوان نصیر

  

لاہور(کرائم رپورٹر)ڈائریکٹرجنرل پنجاب ایمر جنسی سروس ڈاکٹر رضوان نصیر نے گزشتہ روزریسکیو ہیڈ کوارٹرز میں پنجاب کے تمام اضلاع میں ریسکیو کی ماہانہ کارکردگی کا جائزہ لیا،پنجاب بھر میں سات منٹ ریسپانس ٹائم کو برقراررکھتے ہوئے 129420 ایمر جنسی متاثرین کو ریسکیوکیا۔ریسکیو افسران کی میٹنگ کی صدارت کرتے ہوئے انہوں نے تمام ضلعی ایمرجنسی افسران کو ہدایت جاری کی کہ وہ ایمرجنسی گاڑیوں اور ریسکیو اسٹیشنز کی صفائی کو یقینی بنائیں۔

ڈاکٹر رضوان نصیر نے کہا کہ سروس روزانہ کی بنیاد پر اوسط888 روڈ ٹریفک حادثات پرریسپانڈ کررہی ہے جن میں 1015 افراد کو ایمرجنسی کے متاثرین کو سروسز فراہم کی جارہی ہیں۔ ایمرجنسی عدادوشمار کیمطابق زخمی ہونے والوں میں 75.84فیصد ٹریفک حادثات میں موٹر بائیکس ملوث ہوتی ہیں جبکہ 10.25فیصدبلندی سے گرنے والوں اور4.07فیصد تشدد کے واقعات شامل ہیں ۔، اس لیے انہوں نے ٹریفک پولیس سے اپیل کی کہ بائیک رائیڈرز کے لیے سیفٹی ہیلمنٹ کی پابندی پر عمل کروائے کم عمر بچوں اور بغیر لائسینس گاڑی چلانے والوں کیخلاف قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے۔ انہوں نے والدین سے کہا کہ انکی سماجی ذمہ داری ہے کہ وہ کم عمری میں بچوں کو ڈرائیونگ ہر گز نہ کرنے دیں ۔ انہوں نے کہا کہ ٹریفک قوانین کی پا بندی کر کے بڑی حد تک ٹریفک حادثات پر قابو پایا جا سکتا ہے ۔ ریسکیو 1122کے پراونشل مانیٹرنگ سیل کو ماہستمبر میں موصول ہونے والی ایمرجنسی کالز کا جائزہ لیا گیا جس کے تحت 26631کال ٹریفک حادثات،43638 میڈیکل ایمرجنسی،914آگ لگنے کے واقعات ،2284جرائم کی کال109,ڈوبنے کے واقعات, 35عمارتیں منہدم ہونے کے واقعات اور09دھماکوں کے واقعات اور 9990دیگر ریسکیو آپریشن شامل ہیں جن پر ریسکیو1122نے ریسپانڈ کیا۔اعداد و شمار کے مطابق زیادہ تر حادثات بڑے شہروں میں پیش آئے جن میں258آگ کے واقعات لاہور میں، 88فیصل آباد ،60ملتان، 45گوجرانوالہ ،45راولپنڈی،34سرگودھا، 32ڈی جی خان اور سیالکوٹ میں28آگ لگنے کے واقعات پیش آئے۔ اسی طرح 6550ٹریفک حادثات لاہور میں، 2314فیصل آباد ملتان، 1574گوجرانوالہ، 954بہاولپور،870ساہیوال جبکہ راولپنڈی میں728ٹریفک حادثات رونما ہوئے ۔

مزید :

علاقائی -