وارڈنز کی جانب سے صحافی کی ویڈیو بنانے کا معاملہ ، لاہور ہائیکورٹ نے دبنگ حکم جاری کر دیا

وارڈنز کی جانب سے صحافی کی ویڈیو بنانے کا معاملہ ، لاہور ہائیکورٹ نے دبنگ حکم ...
وارڈنز کی جانب سے صحافی کی ویڈیو بنانے کا معاملہ ، لاہور ہائیکورٹ نے دبنگ حکم جاری کر دیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )لاہور ہائیکورٹ نے ٹریفک وارڈنز کی جانب سے صحافی کی ویڈیو بنانے پر نوٹس لے لیاہے اور کل چیف ٹریفک پولیس افسر کو طلب کر لیاہے اور ویڈیو بنانے پر پابندی عائد کر دی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق جسٹس علی اکبر قریشی نے ٹریفک پولیس پر برہمی کا اظہارکرتے ہوئے کہا کہ عدالت وارڈنز کا کام صرف چالان کرناہے ، ویڈیو بنان نہیں ہے ، وارڈنز کی فوج ، ظفر موج خوس گپیوں میں مصروف رہتی ہے۔ عدالت نے صحافیوں اور شہریوں کی ویڈیو اور تصاویر بنانے پر پابندی عائد کرتے ہوئے چیف ٹریفک افسر کو کل طلب کر لیا ہے ۔عدالت کا کہناتھا کہ جب صحافی نے کہہ دیا کہ اس کا چالان کریں پھر ویڈیو کیوں بنائی گئی ؟ ۔

یاد رہے کہ لاہور ہائیکورٹ کے حکم کے بعد موٹرسائیکل سواروں پر ہیلمٹ نہ پہننے والوں کے خلاف کریک ڈاﺅن شروع ہو گیاہے اوراس حوالے سے ایک ویڈیو سامنے آئی جس میں وارڈنز نے ایک صحافی کو روکا اور اس کی ویڈیو بنانی شروع کر دی اور صحافی کی جانب سے کہا گیاکہ آپ چالان کر دیں لیکن وارڈنز شہری کی تذلیل کرنے میں مصروف ہے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -