وکلاکی جعلی ڈگریوں سے متعلق کیس کی سماعت میں چیف جسٹس کی پاکستان بارکونسل کو جعلی ڈگری والوں کےخلاف ایکشن لینے کی ہدایت

وکلاکی جعلی ڈگریوں سے متعلق کیس کی سماعت میں چیف جسٹس کی پاکستان بارکونسل کو ...
وکلاکی جعلی ڈگریوں سے متعلق کیس کی سماعت میں چیف جسٹس کی پاکستان بارکونسل کو جعلی ڈگری والوں کےخلاف ایکشن لینے کی ہدایت

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وکلاکی جعلی ڈگریوں سے متعلق کیس کی سماعت میں سپریم کورٹ نے پاکستان بارکونسل کو جعلی ڈگری والوں کےخلاف ایکشن لینے  کی ہدایت کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ بارکونسلزڈیٹاہی نہیں دے رہیں،یونیورسٹی والے کیاکریں؟

میڈیا رپورٹس کے مطابق وکلاکی جعلی ڈگریوں سے متعلق کیس کی سماعت چیف جسٹس میاں محمد ثاقب نثار کی سربراہی میں بینچ نے سپریم کورٹ میں کی ۔اس موقع پر چیف جسٹس میاں محمد ثاقب نثار نے ریمارکس دیئے کہ ایڈیشنل رجسٹرار کے پاس 5813 ڈگریاں آئی تھیں۔ بہاؤالدین زکریایونیورسٹی کے نمائندہ نے عدالت میں موقف اپنایا کہ بہاؤالدین زکریایونیورسٹی سے5213 ڈگریاں تصدیق ہوچکیں جبکہ نمائندہ گجرات یونیورسٹی نے عدالت کو آگاہ کیا کہ یونیورسٹی آف گجرات نے 41 ڈگریوں کی تصدیق کی جبکہ4 طلبانے کلیئرنس نہیں کرائی۔سپریم کورٹ نے پاکستان بارکونسل کو جعلی ڈگری والوں کےخلاف ایکشن لےنے کی ہدایت کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ بارکونسلزڈیٹاہی نہیں دے رہیں،یونیورسٹی والے کیاکریں؟عدالت نے وکلاکی ڈگریاں تصدیق کرنے سے متعلق کیس کی مزیدسماعت 11 اکتوبرتک ملتوی کر دی۔

مزید :

قومی -جرم و انصاف -علاقائی -اسلام آباد -