نریندر مودی نے سب سے زیادہ ہوائی اڈے بنانے کا دعویٰ کر دیا

نریندر مودی نے سب سے زیادہ ہوائی اڈے بنانے کا دعویٰ کر دیا
نریندر مودی نے سب سے زیادہ ہوائی اڈے بنانے کا دعویٰ کر دیا

  

ممبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے دعویٰ کیا ہے کہ انہوں نے ملک میں سب سے زیادہ ہوائی اڈے بنائے ہیں جبکہ 2015سال کے بعد ملک میں صرف 6نئے ہوائی اڈے بنے یا ہم یہ بھی کہہ سکتے ہیں کہ مجموعی طور پر10 ہوائی اڈے استعمال میں آئے۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق وزیر اعظم نریندرمودی نے اپنے ایک بیان میں دعویٰ تھا کہ ہندوستان میں اب 100 ہوائی اڈے ہیں اور گذشتہ 4سالوں یعنی مودی حکومت کے اقتدار میں آنے کے بعد ان میں سے 35 ہوائی اڈوں کو مکمل کیا گیا ہے۔ حزب اختلاف کو نشانہ بناتے ہوئے انھوں نے کہا کہ آزادی کے 67 سال بعد 2014 تک ہندوستان میں صرف 65 ہوائی اڈے تھے، جس کا مطلب یہ ہے کہ ہر سال ایک ہوائی اڈہ تعمیر کیا گیا۔ اگر آپ ان اعداد و شمار کو بنیاد بنائیں تو یہ نظر آئے گا کہ موجودہ مودی حکومت نے سالانہ 9ہوائی اڈے تعمیرکئے۔ کیا سرکاری اعداد و شمار بھی وزیر اعظم کے ان دعووں کی تصدیق کرتے ہیں؟ اس سلسلے میں جب پتہ کیا گیا تو وزیراعظم کادعویٰ حقیقت کے برعکس پایا گیا۔شہری ہوابازی کے بنیادی ڈھانچوں کے لئے ذمہ دار ادارہ ائیرپورٹ اتھارٹی کی ویب سائٹ پر فی الحال 101 ہوائی اڈے درج ہیں۔ شہری ہوابازی کے ضابطہ کار ادارہ ڈائریکٹوریٹ جنرل آف سول ایوی ایشن (ڈی جی سی اے) کی فہرست میں 31 مارچ سنہ 2018 تک گھریلو ہوائی اڈے درج ہیں لیکن جب ہم پیچھے مڑ کر دیکھتے ہیں تو اعداد و شمار مزید الجھا دیتے ہیں۔

ڈی جی سی اے کے اعداد و شمار کے مطابق 2015 تک 95 گھریلو ہوائی اڈے موجود تھے، جن میں سے 31 مستعمل نہیں تھے۔ وہیں سنہ 2018 میں ملک میں مجموعی طور پر 101 ہوائی اڈے موجود ہیں، جن میں سے 27 غیر مستعمل ہیں۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ سنہ 2015 کے بعد ملک میں صرف 6 نئے ہوائی اڈے بنے یا ہم یہ بھی کہہ سکتے ہیں کہ مجموعی طور پر10 ہوائی اڈے استعمال میں آئے۔ بہر حال یہ تعداد وزیراعظم مودی کے دعووں کے مقابلے میں بہت کم ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -