عمران خان کی جانب سے وارنٹ گرفتاری کیخلاف عدالت سے رجوع کرنے کے پیش نظر اسلام آباد ہائیکورٹ چھٹی کےروز بھی کھل گئی 

عمران خان کی جانب سے وارنٹ گرفتاری کیخلاف عدالت سے رجوع کرنے کے پیش نظر اسلام ...
عمران خان کی جانب سے وارنٹ گرفتاری کیخلاف عدالت سے رجوع کرنے کے پیش نظر اسلام آباد ہائیکورٹ چھٹی کےروز بھی کھل گئی 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) جج دھمکی کیس میں وارنٹ گرفتاری کے خلاف عمران خان  کا عدالت سے رجوع کرنے کا امکان  تھا ، جس کے باعث اسلام آباد ہائیکورٹ چھٹی کے روز بھی کھل گئی ۔

اسلام آباد ہائیکورٹ  کا ڈائری برانچ کا عملہ آفس پہنچ گیا، ڈائری برانچ کے اسسٹنٹ رجسٹرار اسد خان اسلام آباد ہائیکورٹ پہنچے ۔

خیال رہے کہ  گزشتہ روز  تھانہ مارگلہ کے علاقہ مجسٹریٹ نے چیئرمین پی ٹی آئی اور سابق وزیر اعظم عمران خان کے  وارنٹ گرفتاری جاری کیے ،  بتا یا جا رہا ہے کہ یہ مقدمہ خاتون جج کو دھمکیاں دینے پر درج کیا گیا ہے۔

 20 اگست کو پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے شہباز گل پر مبینہ تشدد کے خلاف آئی جی اور ڈی آئی جی اسلام آباد پرکیس کرنےکا اعلان کیا تھا اور دوران خطاب عمران خان نے شہباز گل کا ریمانڈ دینے والی خاتون مجسٹریٹ کو نام لیکر ایکشن لینے کا عندیہ دیا تھا۔ 

تقریر کے اگلے روز عمران خان کے خلاف انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کرلیا گیا تھا تاہم بعد ازاں اسلام آباد کی انسداد دہشت گردی عدالت نے اسلام آباد ہائی کورٹ کےحکم کے تحت عمران خان کےخلاف کیس سیشن کورٹ منتقل کرنے کا حکم دے دیا تھا۔

ادھر اپنے وضاحتی بیان میں اسلام آباد پولیس نے کہا "چئیرمین پی ٹی آئی عمران خان کے وارنٹ گرفتاری جاری ہونے کا معاملہ  ایک قانونی عمل ہے، عمران خان پچھلی پیشی پر عدالت میں پیش نہیں ہوئے تھے۔ان کی عدالت میں پیشی کو یقینی بنانے کے لیے وارنٹ گرفتاری جاری ہوئے ہیں۔"

مزید :

اہم خبریں -قومی -