پی ٹی آئی نے آڈیو لیکس کی ایف آئی اے سے تحقیقات کا فیصلہ مسترد کر دیا

پی ٹی آئی نے آڈیو لیکس کی ایف آئی اے سے تحقیقات کا فیصلہ مسترد کر دیا
پی ٹی آئی نے آڈیو لیکس کی ایف آئی اے سے تحقیقات کا فیصلہ مسترد کر دیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان تحریک انصاف نے مبینہ دھمکی والے امریکی سائفر سے متعلق عمران خان کی آڈیو لیک کی وفاقی تحقیقاتی ایجنسی (ایف آئی اے) کے ذریعے تحقیقات کا حکومتی فیصلہ مسترد کر دیا ہے ۔

نجی ٹی وی "جیو نیو ز"کے مطابق وفاقی کابینہ کی جانب سے عمران خان کی آڈیو لیکس کے خلاف قانونی کارروائی کی منظوری کے فیصلے پر  ردعمل دیتے ہوئے فواد چودھری نے کہا ہے کہ عمران خان کی حکومت ایک سازش کے تحت ہٹائی گئی، سائفر کی تحقیقات پر حکومتی آمادگی درست سمت کی جانب ایک قدم ہے لیکن انصاف کا تقاضا ہے کہ تحقیقات ایف آئی اے کے بجائے سپریم کورٹ کا بنایا ہوا کمیشن کرے تاکہ دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو سکے،  اسی طرح کا کمیشن آڈیو لیکس کی تحقیقات کے لیے چاہیے۔

دوسری جانب فیصل آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فرخ حبیب کا کہنا تھا عمران خان کو گرفتار کرنا ان کی بہت بڑی بھول ہو گی، عمران خان کی آڈیو لیکس میں کوئی ایسی نئی بات نہیں، عمران خان نے صرف یہ خیال رکھا کہ کسی ملک سے تعلقات خراب نہ ہوں ، فرخ حبیب کا کہنا تھا سائفر ایک حقیقت ہے جو ثابت ہو چکا ہے، ہمارا تو پہلے دن سے مطالبہ تھا کہ جوڈیشل کمیشن بننا چاہیے، ایف آئی اے کی تحقیقات کو مسترد کرتے ہیں، سپریم کورٹ کے جج کی سربراہی میں کمیشن کے ذریعے سائفر کی تحقیقات ہونی چاہئیں.

مزید :

قومی -