وہ آدمی جو اپنے جسم کو صرف ہوا میں کھڑا کرسکتا ہے، ہارورڈ یونیورسٹی کے تحقیق کار راز کا پتہ لگانے پہنچے تو ایسا انکشاف کہ خود بھی حیران پریشان رہ گئے

وہ آدمی جو اپنے جسم کو صرف ہوا میں کھڑا کرسکتا ہے، ہارورڈ یونیورسٹی کے تحقیق ...
وہ آدمی جو اپنے جسم کو صرف ہوا میں کھڑا کرسکتا ہے، ہارورڈ یونیورسٹی کے تحقیق کار راز کا پتہ لگانے پہنچے تو ایسا انکشاف کہ خود بھی حیران پریشان رہ گئے

  


بیجنگ(نیوزڈیسک) آپ نے اکثر دیکھا ہوگا کہ کچھ لوگ ہوا میں بغیر کسی سہارے کے معلق ہوکر سب کو حیران کردیتے ہیں۔ایسی بات کا مظاہرہ اکثر بدھ مت کے پیروکاروں کی جانب سے دیکھنے میں آتا ہے،اس بات کا پتا لگانے ہارورڈ یونیورسٹی کے تحقیق کار جب کوہ ہمالیہ پہنچے تو انہیں ایسی بات کا علم ہوا کہ وہ حیران رہ گئے۔

نوجوان لڑکی کو اپنی ایک ایسی تصویر انٹرنیٹ پر نظر آگئی کہ شرم کے مارے خودکشی ہی کرلی، یہ کوئی فحش تصویر نہ تھی بلکہ۔۔۔ ایسی حقیقت کہ آپ تصور بھی نہیں کرسکتے

ہارورڈ یونیورسٹی کے پروفیسر آف میڈیسن ہربرٹ بنسن اور ان کی ٹیم کی اس وقت حیرت کی انتہا نہ رہی جب انہوں نے دیکھا کہ ہمالیہ میں رہنے والے بدھ مت کے پیروکارنہ صرف ہوا میں معلق ہوسکتے تھے بلکہ یوگا کے ذریعے اپنی انگلیوں کا درجہ حرارت 17ڈگری تک بڑھا سکتے تھے اور تکنیک کو ٹُم موکا نام دیا گیاتاہم اس راز سے پردہ نہیں اٹھایا جاسکا کہ یہ لوگ کس طرح صرف اپنی انگلیوں کا درجہ حرار ت بڑھا رہے تھے۔ان تحقیق کاروں کی حیرت کی انتہا نہ رہی جب انہیں معلوم ہوا کہ یہ لوگ اپنا میٹابولزم64فیصد تک کم کرسکتے تھے۔یہ لوگ 15ہزار فٹ کی بلندی پر اور شدید سردی میں بآسانی رات گزار سکتے تھے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...