جنگ زدہ یمن کی تعمیر نو پر 15ارب ڈالرز لاگت آئے گی

جنگ زدہ یمن کی تعمیر نو پر 15ارب ڈالرز لاگت آئے گی

ریاض (اے پی پی) جنگ سے تباہ حال یمن کی تعمیرنو پر ایک تخمینے کے مطابق پندرہ ارب ڈالرز لاگت آئے گی۔یہ بات یمن کے مقامی انتظامیہ کے وزیر عبدالراقب سیف فتح نے سعودی دارالحکومت ریاض میں یمن کی بعد از جنگ بحالی کے موضوع پر منعقدہ ورکشاپ کے موقع پر کہی ہے۔ان کا کہنا ہے کہ ''عالمی بنک کے تخمینے کے مطابق پندرہ ارب ڈالرز لاگت آئے گی''۔فتح نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ڈونروں کا اعتماد حاصل کرنا کوئی آسان نہیں ہے لیکن یمنی حکومت شفاف اور قابل احتساب پروگراموں کا وعدہ کرتی ہے۔انھوں نے یہ نہیں بتایا ہے کہ یہ رقم کن مدات میں درکار ہوگی گی لیکن جنگ کے بعد یمنی گوناگوں مسائل سے دوچار ہوگئے ہیں۔انھیں خوراک اور پانی کی قلت کا سامنا ہے اور سینی ٹیشن اور حفظان صحت کی سہولتیں نہ ہونے کے برابر ہیں۔یمنی حکومت اور خلیج تعاون کونسل کے زیراہتمام مابعد تنازعے بحالی اور تعمیر نو کے موضوع پر اس دو روزہ ورکشاپ میں عالمی امدادی ایجنسیوں اور اداروں کے نمائندوں نے شرکت کی ہے۔

مزید : عالمی منظر