وسیم اختر کو جیل میں قانون کیخلاف سہولت نہیں دے سکتے ، وزیر اعلٰی سندھ

وسیم اختر کو جیل میں قانون کیخلاف سہولت نہیں دے سکتے ، وزیر اعلٰی سندھ

کراچی(آئی این پی )وزیر اعلی مراد علی شاہ نے کہاہے کہ ہرقیدی کوجیل میں قانون کے مطابق سہولت دی جاتی ہے، کسی قیدی کو اس کے عہدے کی وجہ سے خصوصی سہولت نہیں دی جائے گی۔ کراچی میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے وزیراعلی مراد علی شاہ نے کہا کہ اختیارات سے متعلق قانون موجود ہے، منتخب بلدیاتی نمائندوں کے اختیارات قانون کے مطابق دیے جائیں گے۔ کراچی کے میئر وسیم اختر کو جیل میں خصوصی سہولتوں سے متعلق سوال پروزیراعلیٰ نے کہا کہ ہرقیدی کوجیل میں قانون کیمطابق سہولت دی جاتی ہے۔ کسی قیدی کو اس کے خصوصی عہدے کی وجہ سے خصوصی سہولت نہیں دی جائے گی۔ وزیر اعلی نے کہا کہ کراچی آپریشن کامیاب اس وقت ہوگا جب پولیس اپنے پاؤں پر کھڑی ہوگی جب کہ 22 اگست کے واقعات کے ذمے داروں کو سزا دی جائے گی۔ تجاوزات کے خاتمے کے حوالے ان کا کہنا تھا کہ تجاوزات کا خاتمہ ایک دن میں ممکن نہیں لیکن اس کے خلاف کارروائی جاری رہے گی، تجاوزات کے زمرے میں جو بھی عمارت آئے گی وہ گرا دی جائے گی، صرف سیاسی جماعت کے دفاتر نہیں گجرنالے پر3 منزلہ عمارتیں بھی گرائی ہیں۔وزیراعلی سندھ کا کہنا تھا کہ اسٹریٹ کرائم ختم کرنا ممکن نہیں پراس کو کنٹرول کیاجاسکتا ہے، اسٹریٹ کرائم میں ملوث ملزمان کو پکڑ کر سزا دینا ہماری ذمے داری ہے، گزشتہ مہینے میں ہرعلاقے میں جرائم میں کمی ہوئی جب کہ جرائم ختم کرنے کے لیے کوششیں جاری رکھیں گے۔ اس سے قبل سینٹرل پولیس آفس کراچی میں ترقی پانے والے پولیس افسران کے اعزاز میں تقریب میں خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلی سندھ مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ ملک کیلئے جانیں قربان کرنے والے قابل تعریف ہیں، ترقی پانے والے افسران کی ذمے داری اور بڑھ گئی

وزیراعلیٰ سندھ

مزید : علاقائی


loading...