خالد سومرو قتل کیس فوجی عدالت منتقل کرنے کا فیصلہ، جے یو آئی کا احتجاج ختم

خالد سومرو قتل کیس فوجی عدالت منتقل کرنے کا فیصلہ، جے یو آئی کا احتجاج ختم

کراچی: (دنیا نیوز) کراچی میں جمعیت علماء اسلام ف کے تحت صوبہ سندھ کے مرکزی رہنما ڈاکٹر خالد محمود سومرو کے قاتلوں کی عدم گرفتاری اور مقدمہ فوجی عدالت میں نہ چلانے کے خلاف احتجاجی ریلی نکالی گئی۔ ایم اے جناح روڈ پر نمائش چورنگی سے شروع ہونے والی ریلی میں کارکنوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ شرکاء4 جے یو آئی کے مرکزی رہنما ڈاکٹر راشد محمود سومرو کی قیادت میں وزیر اعلی ہاؤس جانا چاہتے تھے تاہم پولیس اور انتظامیہ نے کنٹیرز کھڑے کر کے تبت سینٹر پر شرکاء کو آگے جانے سے روک دیا۔ ابتدائی طور پر پولیس نے مذاکرات کی کوشش کی تاہم مظاہرین کے سخت رد عمل کے باعث انہیں پیچھے ہٹنا پڑا۔ مشیر قانون مرتضی وہاب اور سینیٹر عبدالقیوم سومرو میدان میں آئے اور رہنماؤں سے مذاکرات شروع کئے۔ حکومتی وفد نے ڈاکٹر خالد محمود سومرو قتل کا مقدمہ فوجی عدالت میں بھیجنے کی سمری جے یو آئی کے رہنماوں کو پیش کی جبکہ مدارس کے حوالے سے قوانین میں ترمیم پر بھی انہیں اعتماد میں لینے کی یقین دہانی کرائی۔ حکومت کے ساتھ کامیاب مذاکرات کے بعد جے یوآئی نے احتجاج اور دھرنا ختم کرنے کا اعلان کر دیا۔ ایم اے جناح روڈ پر ہونے والے احتجاج اور دھرنے کے باعث اطراف کی سڑکوں پر ٹریفک کی روانی متاثر ہوئی۔

مزید : علاقائی


loading...