رائل پام کلب پر قبضہ کرنے کے الزام میں وفاقی وزیر ریلوے سمیت دیگر حکام کیخلاف اندراج مقدمہ اور کلب کی بندش کیخلاف درخواستوں پر وکلا کودلائل مکمل کرنے کی ہدایت

رائل پام کلب پر قبضہ کرنے کے الزام میں وفاقی وزیر ریلوے سمیت دیگر حکام کیخلاف ...

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائیکورٹ نے رائل پام کلب پر قبضہ کرنے کے الزام میں وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق سمیت دیگر حکام کے خلاف اندراج مقدمہ اور کلب کی بندش کے خلاف درخواستوں پر وکلا کو دلائل مکمل کرنے کی ہدایت کردی ۔جسٹس شمس محمود مرزا نے رائل پام کلب کی انتظامیہ کی درخواست پر سماعت کی تو درخواست گزار کلب کے وکیل بیرسٹر علی ظفر نے موقف اختیار کیا کہ کلب اور ریلوے انتظامیہ کے درمیان معاہدہ طے پایا تھا کہ اگر کوئی تنازع پیدا ہوجائے تو اسے باہمی مشاورت سے حل کیا جائے گا اور اگر اس سے بھی مسئلہ حل نہ ہو تو ثالثی کے ذریعے معاملہ کو حل کیا جائے گا لیکن ریلوے انتظامیہ نے اس کے باوجود کلب پر قبضہ کرلیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ ریلوے انتظامیہ نے بلاجواز کلب کو بند کردیاہے۔ وکلا نے الزام لگایا کہ ریلوے انتظامیہ نے کلب پر قبضہ کیا اور اس کی املاک کو نقصان پہنچایا ہے جس پر وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد اور ریلوے حکام کے خلاف اندراج مقدمہ کی درخواست دی لیکن ماتحت عدالت نے مقدمہ درج کرنے کا حکم نہیں دیا، وکلا نے استدعا کی کلب پر قبضہ کرنے اور اس کی املاک کو نقصان پہنچانے پر خواجہ سعد رفیق اور دیگرحکام کے خلاف درج کرنے کا حکم دیا جائے، عدالت نے درخواست گزار کلب کے وکلا کو آج 2ستمبر تک دلائل مکمل کرنے کی ہدایت کردی ہے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...