تعلیم اور تحقیق کے بغیر قوم ترقی نہیں کرسکتی ‘ لیاقت بلوچ

تعلیم اور تحقیق کے بغیر قوم ترقی نہیں کرسکتی ‘ لیاقت بلوچ

ملتا ن(کا مر س ر پو ر ٹر)جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کہاکہ تعلیم ،سائنس و ٹیکنالوجی اور تحقیق کے بغیر کوئی قوم ترقی نہیں کرسکتی۔نظام تعلیم ،تعلیمی اداروں (بقیہ نمبر36صفحہ12پر )

اور طلبہ و اساتذہ کی بامقصد تعلیم کے لیے نظام اور ذہن سازی ناگزیر ہے۔ قرضوں اور سود کی لعنت کی وجہ سے آئی ایم ایف،ورلڈ بینک ،ڈی ایف آیی ڈی،یو ایس ایڈ جیسے ادارے ہماری تعلیم،تہذیب اور نئی نسل کے مستقبل پر حملہ آور ہیں۔حکومت سرکاری تعلیمی ادارے اور پرائیویٹ سیکٹر کے تعلیمی ادارے تعلیم اور نئی نسل کے مستقبل کے تحفظ کے مشترکہ ذمہ دار ہیں۔لیاقت بلوچ نے مطالبہ کیا اورتجویزکیا کہ طبقاتی نظام تعلیم اور انحصار کا درآمد شدہ نظام تعلیم کی بجائے یکساں نظام تعلیم نافذ کیا جائے۔سپریم کورٹ کے فیصلے اور آئین کے مطابق ذریعہ تعلیم،ذریعہ امتحان اور مقابلہ کے امتحانات اردو میں لئے جائیں ۔ قومی زبان اردو کو لازماً نافذ کیا جائے۔مجموعی قومی پیداوار کا اخراجات میں دفاع اور تعلیم پر برابر اخراجات کیے جائیں۔تعلیمی نظریاتی اور اخلاقی کرپشن ختم کی جائے۔سیاسی جماعتیں اور عوام آئین کی دفعات 62-63کے معیار کے مطابق امیدواران اور قیادت کا انتخاب کریں۔انسانیت کی عظمت،انسانوں پر ظلم اورحقوق کی پامالی کشمیر اور فلسطین اتحاد و امت وحدت و یکجہتی کو نصاب تعلیم میں شامل کیا جائے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر