” سیکس ورکر “ کیوں کہا؟ ٹرمپ کی اہلیہ کا ڈیلی میل کیخلاف ڈیڑھ کروڑ ڈالر ہرجانے کا دعویٰ

” سیکس ورکر “ کیوں کہا؟ ٹرمپ کی اہلیہ کا ڈیلی میل کیخلاف ڈیڑھ کروڑ ڈالر ...
” سیکس ورکر “ کیوں کہا؟ ٹرمپ کی اہلیہ کا ڈیلی میل کیخلاف ڈیڑھ کروڑ ڈالر ہرجانے کا دعویٰ

  


واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک)امریکہ میں رپبلکن پارٹی کے صدارتی امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ کی اہلیہ ملانیا ٹرمپ نے اخبار ڈیلی میل اور ایک امریکی بلاگر کے خلاف اس الزام پر ڈیڑھ کروڑ ڈالر کے ہرجانے کا دعویٰ دائر کیا ہے جس میں انہیں ماضی کی سیکس ورکر کہا گیا تھا۔ برطانوی اخبار ڈیلی میل نے لکھا تھا کہ ملانیا ٹرمپ نے نیویارک میں کبھی کبھی بطور ایسکورٹ (ہم رکاب) کام کیا اور وہیں ان کے شوہر ڈونلڈ ٹرمپ سے ان کی ملاقات ہوئی۔بلاگر ویبسٹر ٹرپیلی نے لکھا ہے کہ ملانیا ٹرمپ اس بات سے خوفزدہ ہیں کہ کہیں ان کے ماضی کے متعلق عوام آگاہ نہ ہوجائے۔ بی بی سی کے مطابق اس حوالے سے عدالت میں جو دستاویزات پیش کی گئی ہیں ان کے مطابق ڈیلی میل نے سلووینیا کے ایک جریدے ’سوزی‘ کے حوالے سے لکھا ہے کہ جس ماڈلنگ ایجنسی میں ملانیا کام کرتی تھیں وہ بطور ایسکورٹ ایجنسی کی تقریبات میں شرکت کرتی تھی۔

اخبار نے سلووینیا کے ایک صحافی بوجان پوزر کا بھی حوالہ دیا ہے جن کا دعویٰ ہے کہ نیویارک میں ملانیا ٹرمپ نے سنہ 1995 میں برہنہ تصویریں بنوائی تھیں، ان کا الزام ہے کہ اسی برس ان کی ملاقات ڈونلڈ ٹرمپ سے ہوئی تھی۔تاہم ملانیا ٹرمپ کے وکیل چارلس ہارڈر کا کہنا ہے کہ تمام الزامات بے بنیاد ہیں ۔ ملانیا ٹرمپ کے متعلق کئی ایسی باتیں کہی گئی ہیں جو 100 فیصد جھوٹ ہیں اور وہ ان کی ذاتی یا پیشہ ورانہ ساکھ کے لیے انتہائی تباہ کن ہیں۔ ملانیا کے وکیل کا کہنا ہے کہ وہ 1996 میں امریکہ منتقل ہوئی تھیں اور 2005 میں انہوں نے ڈونلڈ ٹرمپ سے شادی کی تھی۔

مزید : بین الاقوامی


loading...