مردان : خیبر پی کے پولیس کے جوان نے بہادری کی داستان رقم کر دی، زخمی ہونے کے باوجود خود کش حملہ آور کو گولی کا نشانہ بناکر سینکڑوں جانیں بچا لیں، شہادت کے رتبے پر فائز

مردان : خیبر پی کے پولیس کے جوان نے بہادری کی داستان رقم کر دی، زخمی ہونے کے ...
مردان : خیبر پی کے پولیس کے جوان نے بہادری کی داستان رقم کر دی، زخمی ہونے کے باوجود خود کش حملہ آور کو گولی کا نشانہ بناکر سینکڑوں جانیں بچا لیں، شہادت کے رتبے پر فائز

  


پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک)مردان کچہری کے باہر خودکش حملے میں خیبرپختونخوا پولیس کے جوان نے اپنی جان دے کر سینکڑوں زندگیاں بچا کر بہادری کی نئی داستان رقم کردی۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق کانسٹیبل جنید حسب معمول ڈیوٹی دینے مردان کچہری پہنچا تو ایک خودکش بمبار نے کچہری گیٹ کے باہر اندھا دھند فائرنگ کردی۔ گولیاں لگنے سے کانسٹیبل جنید اور اس کا ساتھی اعظم زخمی ہوگئے مگر جنید نے ہمت نہ ہاری اور خودکش حملہ آور کو روکتے ہوئے اپنی بندوق کا منہ کھول دیا۔اس پر

خودکش حملہ آور نے بدحواس ہوکر دھماکا کردیا جس میں جنید جان کی بازی ہار گیا مگر اس دلیر سپاہی نے شجاعت کی نئی داستان رقم کردی۔

مردان میں ضلع کچہری کے گیٹ پر دھماکے، وکلا اور پولیس اہلکاروں سمیت13شہید ،60زخمی

 جنید کی عید کے بعد شادی تھی ۔شہید کے اہل خانہ نے اپنے بیٹے کی شہادت پر فخرکا اظہار کیا ہے۔واضح رہے کہ مردان کے ضلع کچہری گیٹ پر خود کش حملے کے نتیجے میں پولیس اہلکاروں اور وکلا سمیت 13 افراد جاں بحق اور 60 زخمی ہوئے ہیں۔

مزید : قومی


loading...