کلب سسٹم کو مضبوط بنائے بغیر  ہاکی کی ترقی ناممکن، رشید الحسن 

   کلب سسٹم کو مضبوط بنائے بغیر  ہاکی کی ترقی ناممکن، رشید الحسن 

  

اسلام آباد  (اے پی پی) اولمپیئن رشید الحسن نے کہا ہے کہ ملک میں کلب سسٹم کو مضبوط بنائے بغیر ہاکی کی ترقی ناممکن ہے اور ہاکی کی بہتری کے لئے عہدیداروں کو سفارشی اور پرچی کلچر کو ختم کرنا ہو گا۔  انہوں نے کہا کہ ملک میں ہاکی کا بے پناہ ٹیلنٹ موجود ہے اور ملک میں ہاکی کی ترقی کے لئے گراس روٹ سطح پر سیاست کو ختم کر کے کلب سسٹم پر دھیان دینے کی ضرورت ہے۔

 اور اس سے ملک میں ہاکی مضبوط ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ کھیلوں کی ترقی کے لئے گراس روٹ سطح پر تعلیمی اداروں کا بڑا اہم کردار ہوتا ہے۔  تعلیمی اداروں میں ہاکی کے مقابلوں کا انعقاد زیادہ سے زیادہ ہونا چاہئے اس سے نوجوان آگے آئیں گے اور ان نوجوان کھلاڑیوں کو کیمپوں میں تربیت دے کر پالش کیا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومتوں کو بھی کھیلوں کے لئے زیادہ سے زیادہ فنڈز رکھنے چاہیئں کیونکہ صحت مند معاشرے کے لئے کھیلوں کا انعقاد بھی بہت ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ فیڈریشن کا کام کھیل کی بہتری کا سوچنا ہوتا ہے نہ کہ کلب کی سیاست کرنا کہ ضلعی سطح پر مخالفین کے کیسے کلب ختم کرنے ہیں۔

 اولمپک، عالمی اور ایشیائی سطح پر ملک کا نام روشن کرنے والے کھلاڑی رشید الحسن نے وزیراعظم عمران خان سے اپیل کی ہے کہ وہ بھی ہاکی کھیلتے رہے ہیں اور ہمیں ان سے بہت امیدیں وابستہ ہیں کہ وہ  ملک کے قومی کھیل ہاکی سمیت دیگر کھیلوں  کی ترقی   کے لئے اقدامات کریں گے۔  انہوں  نے وزیر اعظم عمران خان سے یہ بھی اپیل کی ہے کہ ذاتی دلچسپی لے کر ہاکی پر توجہ دیں تاکہ قومی کھیل دوبار عروج پر آ سکے۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -