فیکلٹی ویٹرنری سائنسززکریا یونیورسٹی اور بروک کے مابین ریسرچ معاہدہ 

   فیکلٹی ویٹرنری سائنسززکریا یونیورسٹی اور بروک کے مابین ریسرچ معاہدہ 

  

ملتان (سٹاف رپورٹر)بہاء الدین زکریا یونیورسٹی کی فیکلٹی آف ویٹرنری سائنسز اور بروک پاکستان کے مابین ریسرچ معاہدہ ہوگیا‘ مفاہمتی یادداشت (MOU)کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر منصور اکبر کنڈی نے ایم او یو کو مستقبل میں طلباء و طالبات کی ٹریننگ کیلئے اہم قرار دیا اور پاکستان کی اقتصادی ترقی میں لائف سٹاک اور ویٹرنری (بقیہ نمبر14صفحہ6پر)

کی اہمیت کو اجاگر کیا۔ڈِین فیکلٹی آف ویٹرنری سائنسز ڈاکٹر مسعود اختر نے اس مفاہمتی یاداشت کو طلباء، طالبات اور فیکلٹی کیلئے ایک اہم سنگ میل قراردیا۔ انہوں نے کہا وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر منصور اکبر کنڈی کی بہترین قیادت میں ان کی ایچ ای سی میں بطور ایگزیکٹو ڈائریکٹر اور بطور وائس چانسلر گومل یونیورسٹی کے تجربے کی بدولت جامعہ زکریا مختصر عرصے میں تیزی کے ساتھ ترقی کرتے ہوئے نظرآرہی ہے۔ وائس چانسلر کے علم اور تجربے سے یونیورسٹی بھرپور فائدہ اٹھارہی ہے۔ ڈِین ڈاکٹر مسعود اختر نے کہاکہ طلباء کو بروک انٹرنیشنل پاکستان کے تجربے سے مستفید ہونے اور جانوروں  کے امراض کی تشخیص اور ان کے علاج کے بارے میں سیکھنے کے بہتر مواقع میسر ہوں گے اور طلباء فیلڈ میں بروک پاکستان کے شانہ بشانہ تعلیمی اور تحقیقی امور پر کام کر سکیں گے اور خطے میں لائیو سٹاک کے فروغ میں نمایاں کردار ادا کریں گے۔ اس موقع پر بروک پاکستان ملتان ریجن کے منیجر ڈاکٹر محمد شفیع خٹک نے مفاہمتی یاداشت پر دستخط کئے اور ڈاکٹر میاں محمد اویس نے فیکلٹی کا تعارف پیش کیا جس کے بعد ڈاکٹر جاوید اقبال گوندل نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے مفاہمتی یادداشت کی اہمیت اور بروک انٹرنیشنل کی پاکستان میں سرگرمیوں کو اجاگر کیا۔ ڈاکٹر محمد عرفان انور نے کہا کہ فیکلٹی قومی اور بین الاقوامی سطح پر مختلف امور پرمستند اداروں سے تعلیمی اور تحقیقی روابط کو تقویت دے رہی ہے۔فیکلٹی آف ویٹرنری سائنسز کے تمام شعبہ جات کے صدور اور دیگر فیکلٹی ممبران میں ڈاکٹر تنویر احمد، ڈاکٹر عبدالوحید، ڈاکٹر محمد رضا حمید، ڈاکٹر ارشد جاوید اور حافظ سیف الرحمن بھی موجود تھے۔ 

معاہدہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -