گاڑیوں کی رجسٹریشن کیلئے بائیو میٹرک نظام متعارف کرانے کی منظوری 

  گاڑیوں کی رجسٹریشن کیلئے بائیو میٹرک نظام متعارف کرانے کی منظوری 

  

 لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے صوبے میں گاڑیوں کی رجسٹریشن کیلئے بائیو میٹرک نظام متعارف کرانے کی اصولی منظوری دے دی ہے۔ گاڑیوں کی رجسٹریشن ٹرانسفر آرڈرفارم کی بجائے بائیو میٹرک تصدیق کے ذریعے ہوسکے گی اور اس کیلئے پنجاب موٹر وہیکلز رولز1969میں ضروری ترامیم کی جائیں گی۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا ہے کہ گاڑیوں کی رجسٹریشن کے پرانے نظام کو تبدیل کر کے جدید تقاضوں کے ہم آہنگ کررہے ہیں۔شہری نادرا اورایکسائز کے دفاتر میں بائیو میٹرک تصدیق کراکر گاڑیوں کی رجسٹریشن کراسکیں گے۔گاڑیوں کے بااختیار ڈیلرز کے شوروم پر بھی بائیو میٹرک تصدیق کی سہولت ہوگی اور شہریوں کو محکمہ ایکسائز وٹیکسیشن کے دفاترکے چکر لگانے سے نجات ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ شہریوں کو رجسٹریشن کرانے میں مزید آسانیاں دینے کیلئے گھر میں موبائل فون کے ذریعے بائیو میٹرک تصدیق کرانے کے عمل کا جائزہ لیا جائے اور اس ضمن میں جامع پلان تیار کر کے جلد حتمی سفارشات پیش کی جائیں۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے ہدایت کی کہ گاڑیوں کی نمبر پلیٹس کے اجراء کے عمل کو مزید تیز کیا جائے۔ نمبر پلیٹس نہ ملنے سے لوگوں کو مشکلات کا سامنا ہے،یہ مسئلہ جلد حل کرنا چاہتا ہوں۔نمبر پلیٹس کے اجراء میں پہلے ہی دیر ہوچکی،اب مزید تاخیر کی کوئی گنجائش نہیں۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی زیرصدارت وزیراعلیٰ آفس میں اجلاس منعقد ہوا جس میں محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن سے متعلقہ امور، گاڑیوں کی رجسٹریشن کے نئے نظام اور نمبر پلیٹس کے اجراء کا جائزہ لیا گیا۔ صوبائی وزیر ایکسائز و ٹیکسیشن حافظ ممتاز احمد،چیف سیکرٹری،سیکرٹری خزانہ،ایم ڈی پیپرا،سیکرٹری قانون،سیکرٹری ایکسائز و ٹیکسیشن،چیئرمین پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ،ڈی جی ایکسائز،سپیشل مانیٹرنگ یونٹ کے سربراہ اورمتعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔ سردار عثمان بزدار کی زیر صدارت وزیراعلیٰ آفس میں اعلیٰ سطح کا اجلاس منعقد ہوا جس میں کوہ سلیمان کی رودکوہیوں کے پانی کو ضائع ہونے سے بچانے کیلئے چھوٹے ڈیمز بنانے کے حوالے سے امور کا جائزہ لیا گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے علاقے میں 4 سمال ڈیمز پر ابتدائی کام شروع کرنے کی اصولی منظوری دیتے ہوئے کہا کہ پانی کے ذخیرے کیلئے چھوٹے ڈیم بناناوقت کی ضرورت ہے اور پنجاب حکومت چھوٹے ڈیمز کے لئے مختلف آپشن پر غور کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کوہ سلیمان کی رودکوہیوں میں ہر سال لاکھوں کیوسک پانی ضائع ہوتاہے اور اس قیمتی پانی کو محفوظ بنانے اوراستعمال لانے کیلئے سمال ڈیمز کا منصوبہ اہمیت کا حامل ہے۔ چھوٹے ڈیموں کی تعمیر سے پسماندہ علاقوں کے لوگوں کو پینے کا صاف پانی میسر آئے گا۔ انہوں نے کہا کہ پہلے مرحلے میں چار سمال ڈیمز کی تعمیر کیلئے ٹیکنیکل سٹڈی کی جاری ہے۔سیکرٹری آبپاشی نے وزیراعلیٰ عثمان بزدار کو سمال ڈیمز کی تعمیر کے منصوبے کے اہم امور سے آگاہ کیا۔ صوبائی وزیر حافظ ممتاز احمد،چیف سیکرٹری،چیئرمین منصوبہ وترقیات،سیکرٹری خزانہ،سیکرٹری آبپاشی،سپیشل مانیٹرنگ یونٹ کے سربراہ اور متعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔

عثمان بزدار

مزید :

صفحہ اول -