نیب کا صوبائی وزیر کی رہائشگاہ پرچھاپہ، اہم دستاویزتحویل میں لے لیں 

نیب کا صوبائی وزیر کی رہائشگاہ پرچھاپہ، اہم دستاویزتحویل میں لے لیں 
نیب کا صوبائی وزیر کی رہائشگاہ پرچھاپہ، اہم دستاویزتحویل میں لے لیں 

  

 سکھر(ڈیلی پاکستان آن لائن)نیب نے آمدن سے زائد اثاثہ جات کے معاملے پر پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور صوبائی وزیر سندھ سہیل انورسیال کی رہائشگاہ پرچھاپہ مار کر اہم دستاویزتحویل میں لے لیں۔ 

نجی ٹی وی کےمطابق نیب کی ٹیم نے ٌپیپلز پارٹی کےرہنماصوبائی وزیرسندھ سہیل انورسیال کی لاڑکانہ میں رہائشگاہ پرچھاپہ مارااور اہم دستاویز تحویل میں لے لیں، نیب کی  ٹیم ہرکمرے کی تلاشی لے رہی ہے،

نیب کی ٹیم مزید کارروائی میں مصروف ہے اور تفتیش کی جا رہی ہے۔ ذرائع نیب کا کہنا ہے کہ سہیل انور سیال کے گھر آمدن سے زائد اثاثہ جات کے معاملے پرچھاپہ مارا گیا، سہیل انور سیال کیخلاف کچھ عرصے سے تحقیقات کی جارہی ہیں۔

دوسری جانب سہیل انورسیال نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ نیب سیاسی انتقامی کارروائی پر اتر آیا ہے،بے نامی رہائشگاہ کا جواز بنا کر چھاپہ مارا گیا گاؤں فرید آباد میں جس گھر پر چھاپہ مارا گیا والد کے نام ہے، والد کا انتقال ہو چکا ،نیب کی کارروائی میرے والد کے قبر کا ٹرائل ہے۔سہیل انور سیال کا کہنا تھا کہ آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس پر ہائیکورٹ سے ضمانت ملی ہے، یہ بے نامی جائیداد نہیں میرے والد کی ایف بی آر میں ڈکلیئرڈ جائیداد ہے۔ صوبائی وزیر کا کہنا ہے کہ میرے والد کا انتقال 2018میں ہوا تھا، میرے والد زندہ نہیں ہیں،ان کی ڈکلیئرڈ پراپرٹی کوبے نامی ظاہرکیاجارہاہے، میرے پاس فی الحال کوئی تفصیل نہیں اسوقت میرپور خاص میں ہوں۔ انھوں نےکہا کہ مجھے ابھی صرف اپنے گھر سے فون آیا ہے، نیب کی ٹیم کو کوئی دستاویز نہیں ملی ہیں، نیب کی ٹیم اس وقت میری رہائشگاہ پر موجود ہے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -سکھر -