لوڈشیڈنگ نے تاجروں کو ذہنی مریض بنا دیا، عرفان اقبال شیخ

لوڈشیڈنگ نے تاجروں کو ذہنی مریض بنا دیا، عرفان اقبال شیخ

لاہور(وقائع نگار ) سنیئر نائب صدر لاہور چیمبر آف کامر س اینڈ انڈسڑی و قومی تاجر اتحاد لاہور کے صدر عرفان اقبا ل شیخ اور چیئرمین راجہ حامد ریاض نے کہا کہ لاہور میں طویل لوڈشیڈنگ نے تاجروں اور شہریوں کا جیناحرام کردیا ہے۔مہنگی ترین بجلی خریدنے کے باوجود تاجر وصنعتکار بجلی کی بڑھتی ہوئی لوڈشیڈنگ کی وجہ سے عذاب میں مبتلا ہو کر ذہنی مریض بن چکے ہیں ۔تجارتی علاقے سنسان اور شہری پانی سے بھی محروم ہیں اُنھوں نے کہا کہ فوری طور پر نوٹس نہ لیا گیا تو سخت ردعمل کاسامنا ہوسکتا ہے ۔بجلی وپانی کی عدم دستیابی کی وجہ سے عام آدمی یہ سوچنے پر مجبور ہو چکا ہے کہ تاجروں کو ایک سازش کے تحت اضطرابی کیفیت میں مبتلا کیا جا رہا ہے ۔لہذا فوری طور پر اس مسئلہ کا نوٹس لیا جائے ۔ عرفان اقبال شیخ نے یہ بات گزشتہ روز لنک روڈ ماڈل ٹاون کے صدر راجہ جاوید کی جانب سے بلائے گئے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ اُنھوںنے کہا کہ نگران حکومت فوری طور پر بجلی بحران پر قابو پانے کے لیے عملی اقدامات کرئے صرف چند پیسے پٹرولیم میں کمی معاشی بحران کا حل نہیں بلکہ یہ صرف ایک تسلی کے مترادف ہے۔ اُنھوں نے کہا کہ نگران حکومت کی اولین ترجیح بجلی کا بحران ہونا چاہئے وفاقی و صوبائی سطح پر حکومتی ایوانوں اور دفاتر میں ائرکنڈیشنڈ کا استعمال فوری طور پر کم کیا جائے انٹرنیشنل پاور کمپنیوں کو اد ائیگی کی جائے تاکہ بجلی بحران پر قابو پایا جائے معیشت کا پہیہ چلتا رہے اور لوڈشیڈنگ کا دورانیہ 18 گھنٹے سے کم کرکے 8گھنٹے کیا جائے۔ انھوں نے نگران حکومت سے مطالبہ کیا کہ کفائیت شعاری اپناتے ہوئے ایسے دوررس فیصلے کرے جسکی تقلیدآنے والی منتخب حکومت کو بھی کرنی پڑے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...