’میں ایک دوست کیساتھ جرمنی کے بازارمیں کھڑا تھا، یہ پاس سے گزری تو میں نے ہیلو کہاکہ اور پھر۔ ۔ ۔‘ پاکستانی جوان نے جرمن خاتون سے معاشقے کا دلچسپ قصہ سنادیا

’میں ایک دوست کیساتھ جرمنی کے بازارمیں کھڑا تھا، یہ پاس سے گزری تو میں نے ...
’میں ایک دوست کیساتھ جرمنی کے بازارمیں کھڑا تھا، یہ پاس سے گزری تو میں نے ہیلو کہاکہ اور پھر۔ ۔ ۔‘ پاکستانی جوان نے جرمن خاتون سے معاشقے کا دلچسپ قصہ سنادیا

  

گوجرانوالہ(ڈیلی پاکستان آن لائن) جرمنی کی 46سالہ خاتون پاکستانی جوان کی محبت میں گرفتار ہوکر پاکستان پہنچ گئی ، جہاں اس نے اسلام قبول کرنے کے بعد گوجرانوالہ کے عاطف رضوان سے شادی بھی کرلی ، جرمن خاتون مائیکا نے اسلام قبول کرنے کے بعد نیا نام فاطمہ رکھ لیا۔

اپنے معاشقے کی داستان سناتے ہوئے عاطف رضوان نے بتایاکہ ’پہلی بار فاطمہ کو پروپوز میں نے کیا ، ، ایک دوستکے پاس جرمن شہرلائپسی کی مارکیٹ میں کھڑا تھا، یہ خاتون آئی اور اسے کپڑے وغیرہ بڑے پسند آئے ،میں ہیلو کہاتوجواب مل گیا اور پھر بات آگے بڑھ گئی، مجھے کہاکہ بڑا اچھاہے اور میں نے جواب میں کہاکہ آپ بھی بہت اچھی ہو، پھر یہ ایک ہفتہ تک نہیں آئی، انتظار کرتے کرتے دو ہفتے بیت گئے تو مایوس ہوگیا، اسی پریشانی میں مین سٹیشن پر ایک دن کھڑا تھا کہ اس پر نظر پڑگئی، دیکھتے ہی بھنگڑے ڈالنے شروع کردیئے کہ بیگم(معشوق) مل گئی۔ عاطف نے بتایاکہ پہلا خیال ذہن میں یہی آیا کہ نمبر تو لے لیں، باقی باتیں بعد میں ہوں گی، نمبر دیتے ہی یہ بولی کہ ہوٹل سے روٹی کھاکرآتی ہوں ، بعد میں بات کریں گے ، ایک گھنٹہ انتظار کیا اس کے بعد فون کیا تو جواب ملا کہ آرہی ہوں ، پھر دوسے تین گھنٹے پھرتے رہے ، گھرچھوڑاتو بڑی خوش تھی، دوسرے دن پھول لے کر اس کے گھر پہنچ گیا اور پھر ملاقاتوں کا یہ سلسلہ چل پڑا۔ ایک سوال کے جواب میں عاطف رضوان نے بتایاکہ وہ 2011ءمیں جرمنی گیا تھااورڈیڑھ سال بعد یعنی جون 2012ءمیں فاطمہ سے ملاقات ہوئی۔

فاطمہ نے بتایاکہ دنیا کی ہر چیز مل رہی ہے ، پاکستان آکر خوش ہوں ، پاکستانی کھانوں میں سری پائے پسند ہیں۔

مزید کیا کچھ بتایا ، بچے کتنے چاہیں اور جب خاتون پر پیار حاوی ہوجائے تو وہ کیا مطالبات شروع کردیتی ہے؟ ہنسی سے بھرپور انکشافات کی ویڈیو دیکھئے

مزید :

ڈیلی بائیٹس -