گوگل نے اینڈرائڈ کا نیا ورژن ’’O‘‘ متعارف کرا دیا

گوگل نے اینڈرائڈ کا نیا ورژن ’’O‘‘ متعارف کرا دیا

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) گوگل نے سمارٹ فون آپریٹنگ سسٹم اینڈرائڈ کا نیا ورڑن ’’O‘‘ متعارف کرا دیا ہے جس میں چند نئے دلچسپ اور شاندار فیچرز شامل کئے گئے ہیں۔ ابتدائی طور پر اس ورڑن کا پہلا ڈویلپر پریویو جاری کیا گیا ہے جو گوگل کی مخصوص ڈیوائسز پر انسٹال کیا جا سکے گا۔گزشتہ سال کی طرح اس سال بھی گوگل کچھ توقف کے ساتھ مزید ڈویلپر پریویوز جاری کئے گا جس میں گاہے بگاہے نئے فیچرز شامل کئے جائیں گے اور مکمل تیار ہونے پر اسے دنیا بھر ریلیز کر دیا جائے گا۔ گوگل نے ابتدائی طور پر اسے صرف ’’O‘‘ کا نام دیا ہے اور مکمل نام بعد میں سامنے لایا جائے گا۔ذرائع کے مطابق اس نئے ورڑن میں سب سے بڑی تبدیلی ایپلی کیشنز کے بیک گراؤنڈ استعمال کے دائر کار کو محدود کرنا ہے جس کے باعث کسی بھی سمارٹ فون کی بیٹری دیگر ورڑن کی نسبت زیادہ دیر تک چلتی رہے گی۔ گوگل نے نئے ورڑن میں ایپلی کیشنز پر کئی پابندی لگائی ہیں جس کے باعث بیک گراؤنڈ سروسز اور لوکیشن اپ ڈیٹ کے استعمال کا طریقہ کار یکسر تبدیل ہو گیا ہے۔نئے ورڑن میں ظاہر طور پر کوئی تبدیلی نظر نہیں آتی اور یہ دیکھنے میں اینڈرائڈ نوگیٹ 7.0 اور مارش میلو 6.0 کی طرح ہی ہے لیکن نوٹیفکیشن دکھانے کے طریقہ کار میں تبدیلی کی گئی ہے اور نئی اینی میشنز بھی شامل کی گئی ہیں۔ اس کے علاوہ پکچر ان پکچر فیچر بھی شامل کیا گیا ہے جس کے باعث اب یوٹیوب پر ویڈیو دیکھنے کے ساتھ ہی موبائل پر موجود دیگر ایپلی کیشنز کو بھی استعمال کیا جا سکے گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -