پنجاب یونیورسٹی غیر قانونی بھرتیاں، کیس کی سماعت 15اپریل تک ملتوی

پنجاب یونیورسٹی غیر قانونی بھرتیاں، کیس کی سماعت 15اپریل تک ملتوی

  

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے جج جواد الحسن نے پنجاب یونیورسٹی غیر قانونی بھرتیوں کے کیس کی سماعت 15اپریل تک ملتوی کرتے ہوئے آئندہ سماعت پر ملزموں کو پیش ہونے کی ہدایت کردی جبکہ آمدنی سے زائداثاثہ جات کیس میں سابق وزیراعظم کے پرنسپل سیکرٹری فواد حسن فواد کی بریت کی درخواست پروکلاء کوبحث کے لے طلب کرلیا۔گزشتہ روزپنجاب یونیورسٹی غیر قانونی بھرتیوں کے کیس میں کرونا وائرس کے باعث سابق وائس چانسلر ڈاکٹر مجاہد کامران سمیت 6 ملزم پیش نہ ہوئے،عدالت نے کیس کی سماعت 15 اپریل تک ملتوی کرتے ہوئے آئندہ سماعت پرملزموں کو پیش ہونے کی ہدایت کردی،ڈاکٹرمجاہد کامران کوخلاف قانون 454 افراد کو کنٹریکٹ پر بھرتی کرنے کے الزام کاسامنا ہے،دوسری جانب سابق وزیراعظم کے پرنسپل سیکرٹری فواد حسن فواد کے آمدنی سے زائد اثاثہ جات کیس کی سماعت ہوئی،ملزم فواد حسن فوادنے عدالت پیش ہوکر حاضری لگوائی،عدالت نے فواد حسن فواد کی بریت کی درخواست پر وکلاء کو بحث کے لیے طلب کرتے ہوئے کیس کی سماعت 16 جون تک ملتوی کردی،فواد حسن فواد کو 4 ارب 56 کروڑ کے غیر قانونی اثاثے بنانے کے الزام کا سامنا ہے۔

مزید :

علاقائی -