بااثر زمینداروں نے ذہنی معذور بچے سے 50 لاکھ مالیت کی اراضی ہتھیالی

بااثر زمینداروں نے ذہنی معذور بچے سے 50 لاکھ مالیت کی اراضی ہتھیالی

لاہور (جنرل رپورٹر) چونیاں کے نواحی علاقے ببر کھائی کے بااثر زمینداروں نے ذہنی معذور بچے کو ٹافیوں کے لئے 5 ہزار روپے دے کر 50 لاکھ روپے مالیت کی زمین اپنے نام منتقل کرالی، زمیندار کی اسی جعلسازی میں مقامی پٹواری بھی ان کے ساتھ برابر کا شریک ہے اور تحصیلدار ظفر پڈیار بھی شریک جرم ہیں۔ معذور بچے کے بوڑھے باپ کی تحریری درخواست پر وزیراعلیٰ نے ڈی سی او قصور سے جواب طلب کرلیا ہے اور واقع کی فوری انکوائری کرکے ذمہ داران کے خلاف مقدمہ درج کرانے کا بھی حکم دیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے یہ ایکشن معذور بیٹے عبدالجبار کے بزرگ باپ بابا سلیمان کی تحریری درخواست پر لیا ہے 80 سالہ بابا سلیمان نے گزشتہ روز وزیراعلیٰ کو خیمہ کیمپ میں درخواست دے دی۔ تحصیل چونیاں ضلع قصور کے موضع ببر کھائی کے عبدالجبار جس کا ذہنی توازن درست نہیں بہت ناسمجھ اس کے قریبی رشتہ دار محمد اختر نے اپنے ساتھیوں شوکت علی، زبیر، بشیر کے ساتھ مل کر تحصیل دار اور پٹواری سے ملی بھگت کرکے 8 کینال 11 مرلہ زمین عبدالجبار کو ورغلا ڈراکر اور شادی کا جھانسہ دے کر صرف 5 ہزار روپے دیکر 50 لاکھ مالیت کی زمین اپنے نام کروالی۔ پٹواری سہراب خان نے کہا ہے کہ میرے سامنے پیسوں کی ادائیگی نہیں کی گئی جس کا ذکر میں نے روزنامچہ میں کیا ہے مجھ پر بہت دباﺅ ڈالا گیا ببر کھائی کے نمبردار محمد بشیر نے کہا کہ اختر وغیرہ نے داخلے کے بہانے عبدالجبار کی تصویریں مجھ سے تصدیق کروائی مجھے بعد میں پتہ چلاکہ اختر نے فراڈ کے ذریعے زمین اپنے نام کروالی ہے۔ فراڈیے اختر کے سگے چچا محمد اشرف اور نذیر احمد پسران محمد یعقوب نے کہا کہ اختر نے عبدالجبار کے ساتھ فراڈ کرکے ہماری برادری میںناک کٹوادی، انہوں نے کہا کہ اختر کے خلاف سخت کارروائی ہونی چاہیے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1