ریونیوٹارگٹ نامکمل 151واسا فیلڈ انسپکٹروں کیخلاف کارروائی ایمپلائز ویلفیئر یونین کا احتجاج

ریونیوٹارگٹ نامکمل 151واسا فیلڈ انسپکٹروں کیخلاف کارروائی ایمپلائز ویلفیئر ...

لاہور(جنرل رپورٹر) واسا کے منیجنگ ڈائریکٹر نے ریونیو ٹارگٹ پورا نہ کرنے والے ریکوری سٹاف کے خلاف کارروائی کاعملی طور پر آغاز کردیا ہے ابتدائی طور پر ایم ڈی نے ریکوری ٹارگٹ میں ناکام ہونے والے 151 واسا فیلڈ انسپکٹروں کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے انہیں چارج شیٹ جاری کردی ہے ان انسپکٹروں پر ریکوری نہ کرنے کا الزام ہے جس کے خلاف واسا کی ایمپلائز ویلفیئر (یونین) سی بی اے نے احتجاج شروع کردیا ہے اور ایم ڈی واسا کو 12 نکات پر مشتمل احتجاجی مراسلہ کو جاری کردیا ہے جس میں کہاگیا ہے کہ وہ اس چارج شیٹ کو مسترد کرتے ہیں اور ریونیو فیلڈ سٹاف ناکافی سہولیات کے باعث یہ ٹارگٹ پورا نہیں کرسکا اور ایم ڈی نے الٹا چور کوتوال کو ڈانٹیں کے مترادف اقدام کرتے ہوئے 151 اسسٹنٹ فیلڈ انسپکٹروں کو چارج شیٹ جاری کی ہے جسے فی الفور واپس نہ لیا گیا تو سی بی اے یونین بھرپور احتجاج کا حق محفوظ رکھتی ہے۔ بتایاگیا ہے کہ واسا نے ریونیو فیلڈ سٹاف کو 2010-11 میں 3 ارب 10 کروڑ جبکہ 2011-12 کے لے اڑھائی ارب کا ٹارگٹ دیا جس میں 151 اسسٹنٹ فیلڈ انسپکٹر یہ ٹارگٹ پورا کرنے میں ناکام رہے سب سے زیادہ راوی ٹاﺅن کے فیلڈ انسپکٹر زد میں آئے ہیں اسی ٹاﺅن کے 58 اسسٹنٹ فیلڈ انسپکٹروں کو چارج شیٹ جاری کی گئی ہے۔ دوسری نمبر پر داتا گنج بخش ٹاﺅن جس کے 33 انسپکٹروں کو ناقص کارکردگی پر چارج شیٹ کیاگیا اسی طرح نشتر ٹاﺅن کے 24 اسسٹنٹ فیلڈ انسپکٹروں کو چارج شیٹ جاری کی گئی اقبال ٹاﺅن کے 20 اور شالیمار ٹاﺅن کے 16 فیلڈ انسپکٹروں کو ریکوری ٹارگٹ پور انہ کرنے پر چارج شیٹ کیاگیا ہے ایم ڈی کی چارج شیٹ کو سی بی اے یونین نے مسترد کردیا ہے اور اس کے خلاف احتجاج شروع کردیا ہے اور ایم ڈی کو 12 نکات پر مشتمل احتجاجی مراسلہ دیاہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1