حکومت مخالف احتجاجی مظاہروں کو غیر ملکی فنڈنگ مل رہی ہے : سعد رفیق

حکومت مخالف احتجاجی مظاہروں کو غیر ملکی فنڈنگ مل رہی ہے : سعد رفیق
حکومت مخالف احتجاجی مظاہروں کو غیر ملکی فنڈنگ مل رہی ہے : سعد رفیق

  

 گوجرانوالہ (مانیٹرنگ ڈیسک )وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ حکومت حالت جنگ میں ہے ، کچھ عاقبت نااندیش لوگ اسلام آباد پر چڑھائی کرنا چاہتے ہیں، ہماری حکومت احتجاجی تحریکوں سے گئی تو عمران اور طاہر القادری سن لیںکہ وہ پھر بھی اقتدار میں نہیں آئیں گے۔ ن لیگ کے ممبر صوبائی اسمبلی توفیق بٹ کے والد کی وفات پر اظہار تعزیت کے موقع پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ ڈاکٹر طاہر القادری ملک میں ایک خاص مکتبہ فکر کی حکومت چاہتے ہیں، یہ ملک کسی ایک مسلک کا نہیں تمام مسالک اور اقلیتوں کا بھی ہے، طاہر القادری آگ سے کھیل رہے ہیں، اندھی مذہبی تقلید ملک کو تباہ کر دے گی۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کی تبدیلی کا مشورہ دینے والے الطاف حسین پہلے یہ فارمولا خود پر لاگو کریں، اسلام آباد میں فوج کی تعیناتی حساس تنصیبات کی سیکیورٹی کیلئے کی ہے۔ عمران خان پر تنقید کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کے چیئر مین طالبان سے مذاکرات کے حق میں ہیں لیکن حکومت کےساتھ بات چیت نہیں کرنا چاہتے ۔ یوم آزادی پر ملک میں جنگ کا اعلان کرکے عمران نے خود کو ملک کا سب سے ناپختہ سیاستدان ثابت کردیا ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف پختونخوامیں عوامی توقعات پر پورا نہیں اتر پائی اور اس کا غصہ وہ ہم پر اتار رہی ہے۔ خواجہ سعد رفیق نے شیخ رشید کو ”بی جمالو“ اور چوہدری پرویز الہی کو”پھپھے کٹنی“ قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ ہم عمران خان اور طاہر القادری سے مسلسل رابطے میں ہیں اور بات چیت کا دروازہ کھلا رکھنا چاہتے ہیں۔

مزید : گوجرانوالہ /اہم خبریں