سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کا اجلاس،سینٹر رحمان ملک نے صدارت کی

سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کا اجلاس،سینٹر رحمان ملک نے صدارت کی
سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کا اجلاس،سینٹر رحمان ملک نے صدارت کی

  


اسلام آباد( مانیٹرنگ ڈیسک) سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کا اجلاس ہوا جس کی صدارت سینٹر رحمان ملک نے کی،اجلاس کے دوران جیلوں میں قید یوں کو فراہم کی جانیوالی سہولیات اور اسلام جیل کی تعمیر کے حوالے سے بریفنگ دی گئی۔اجلاس میں اسلام آباد میں زیر تعمیر جیل پر بھی بریفنگ دی گئی جس رحمان ملک نے اس کی تعمیراتی رپورٹ طلب کر لی۔

اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سینٹر رحمان ملک نے کہا کہ ہماری گفتگو فون کالز اور انٹر نیٹ تک کی جاسوسی ہوتی ہے،ایسے آلات استعمال کیے جا رہے ہیں جن کے سگنلز کو روکا نہیں جا سکتا۔،کچھ غیر ملکی سفارتخانے جاسوسی میں ملوث ہیں۔انہوں نے کہاکہ سٹینڈنگ کمیٹی برائے داخلہ کے آ ندہ اجلاس میں آئی ایس آئی اور آئی بی کو بھی طلب کیا گیا ہے کہ وہ آ کر ان کیمرہ بریفنگ دیں ۔

انہوں نے کہا کہ آئندہ اجلاس میں بتایا جائے کہ جیل کی تعمیر پر اب تک کتنا کام ہوا ہے،انہوں نے جیلوں میں ہونیوالی اصلاحات پر عدم اعتماد کا اظہار کیاا ور کمیٹی کے آئندہ اجلاس میں آئی جی جیل خانہ جات اور ہوم سیکرٹری کو طلب کر لیا

سینٹر رحمان ملک نے کہا کہ جیلوں میں لوگوں کی تذلیل کی جاتی ہے۔اسلام آباد کے مضافات میں قائم کچی بستیوں کیخلاف کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے دور حکومت میںسی ڈی اے وزارت کے ماتحت نہیں تھی اس لیے کچی بستیوں کیخلاف آپریشن نہ ہو سکا۔

مزید : قومی