الطاف حسین کی تقریر لندن نہیں دہلی میں لکھی گئی،جنرل راحیل کے آنے سے حالات بدل گئے: ہارون الرشید

الطاف حسین کی تقریر لندن نہیں دہلی میں لکھی گئی،جنرل راحیل کے آنے سے حالات ...
الطاف حسین کی تقریر لندن نہیں دہلی میں لکھی گئی،جنرل راحیل کے آنے سے حالات بدل گئے: ہارون الرشید

  


لاہور (ویب ڈیسک)سینئر صحافی اور تجزیہ نگار ہارون الرشید نے کہا ہے کہ الطاف حسین کی تقریر لندن نہیں بلکہ دہلی میں لکھی گئی اور انہی خطوط پر لکھی گئی جن پر مشرقی پاکستان میں پروپیگنڈا کیا جاتا تھا، ایسا ہی پروپیگنڈا بلوچستان میں بھی کیا جاتا ہے ، جو بھارت کے مرکزی خفیہ ادارے “را” کی حکمت عملی کے مطابق ہے،الطاف حسین کی تقریر میں انسانی حقوق کمیشن کی رپورٹ کا حوالہ ہے۔

نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں گفتگوکرتے ہوئے ہارون الرشید نے کہا کہ ایسی ہی رپورٹس سابق مشرقی پاکستانی کے حوالے سے بھی تیار کی جاتی تھیں، الطاف حسین کی تقریر کا تعلق افغانستان سے بھی ہے ، جہاں بھارتی لابی امن مذاکرات سبوتاڑ کرنے کی کوششیں کر رہی ہے۔ بھارت جال بن رہا ہے کہ پاکستان کو دہشت گردی پر جواب دینا پڑے۔ الطاف حسین نے اپنے ترکش کا آخری تیر بھی چلا دیا ہے۔ دنیا جانتی ہے کہ گریٹر پنجاب، گریٹر پختونستان اور گریٹر بلوچستان کس کے منصوبے ہیں۔ الطاف حسین کو کئی مسائل کا سامنا ہے۔ پارٹی شکست و ریخت سے دوچار ہے۔ خود الطاف حسین کئی بیماریوں میں مبتلا ہیں، جن میں نفسیاتی عوارض بھی شامل ہیں۔ انہوں نے علاج بھی کرایا ہے۔ وقت آ گیا ہے مہاجر اپنے لئے نئی قیادت منتخب کریں۔ حکومت الطاف حسین کی تقریر کا نوٹس لے اور قانونی کارروائی کر کے واضح کرے کہ ایم کیو ایم پر پابندی بھی عائد کی جا سکتی ہے۔ ہارون الرشید نے کہا کہ جب پاکستان کے بارے میں ناکام ریاست ہونے کا تاثر موجود تھا تب کراچی سے گوادر تک الگ ملک بنانے کا منصوبہ تیار کیا گیا، جس میں برطانوی خفیہ ادارہ ایم آئی سکس ملوث تھا، یہی سبب ہے کہ الطاف حسین سی آئی اے اور بھارت سے رابطے میں رہے، جنرل راحیل کے آنے سے حالات بدل گئے۔

مزید : لاہور