بچی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے والے ملزم کے ڈی این اے ٹیسٹ کی رپورٹ آ گئی

بچی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے والے ملزم کے ڈی این اے ٹیسٹ کی رپورٹ آ گئی
بچی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے والے ملزم کے ڈی این اے ٹیسٹ کی رپورٹ آ گئی

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)کورنگی زمان ٹاؤن میں 6 سالہ بچی ماہم سے زیادتی اور قتل میں ملوث ملزم کا ڈی این اے میچ کرگیا ،ڈی این اے میچ کرجانے پرملزم کوباقاعدہ گرفتارکرلیا گیا،گرفتارملزم بچی کا محلہ دار اوررکشہ ڈرائیور ہے۔ملزم ذاکر کو ملتان فرار ہونے سے قبل سہراب گوٹھ سے گرفتار کیا گیا تھا ۔

مقامی اخبار روزنامہ جنگ کے مطابق ڈی آئی جی ایسٹ ثاقب اسماعیل میمن نےپیش رفت سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ گرفتار ملزم کا ڈی این اے مقتولہ بچی کے کپڑوں سے حاصل کئے گئےڈی این اے سے میچ کرگیا ،گرفتار ملزم ذاکرعرف انٹول متاثرہ خاندان کا محلے داراورایک دوسرے کے ساتھ شناسائی ہے،انہوں نے بتایا کہ ملزم نے اندھیرےاوربچی کےمانوس ہونے کا فائدہ اٹھاتے ہوئے اسے زیادتی کا نشانہ بنایا اوراس کے بعد قتل کردیا، گرفتار ملزم کے خلاف سب سے بڑا اور سائنٹیفک ثبوت ڈی این اے میچ کرنا ہے اور واقعہ کے عینی شاہد بھی موجود ہیں جنہوں نے ملزم کو بچی کی لاش کو پھینکتے ہوئے دیکھا ہے گواہاں کے سامنے ملزم کی شناخت پریڈ بھی کرائی جائے گی۔

انہوں نے بتایا کہ جب یہ افسوسناک واقعہ ہوا تو تھانے کا رویہ غیر مناسب تھا اگر تھانہ میں پولیس افسران مناسب طریقے سے ری ایکٹ کرتے تو آج یہ صورتحال نہ ہوتی اور اسی وجہ سے ایس ایچ او زمان ٹاؤن اور ڈیوٹی افسر کو معطل کیا گیا اور15 پولیس کے خلاف بھی ایکشن لیا گیا، ڈی آئی جی ایسٹ نے بتایا کہ گرفتار ملزم شادی شدہ اور چار بچوں کا باپ ہے، رکشہ چلاتا ہے، مقتولہ بچی کے والد نے کہا کہ اگر تمام پولیس افسران اسی طرح اپنا کام کریں تو ایسے واقعات کو روکا جا سکتا ہے ان کی بیٹی تو چلی گئی ہے اب ان کی کوشش ہےکہ کسی اور کی بیٹی کے ساتھ ایساواقعہ نہ ہو ۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -