’ایک قوم ،ایک نصاب ‘ پنجاب میں آغاز کے ساتھ ہی وزیر اعظم عمران خان کے وژن کو بڑا دھچکا ،ایچیسن کالج کے پرنسپل مائیکل تھامس کا خط سامنے آگیا

’ایک قوم ،ایک نصاب ‘ پنجاب میں آغاز کے ساتھ ہی وزیر اعظم عمران خان کے وژن کو ...
’ایک قوم ،ایک نصاب ‘ پنجاب میں آغاز کے ساتھ ہی وزیر اعظم عمران خان کے وژن کو بڑا دھچکا ،ایچیسن کالج کے پرنسپل مائیکل تھامس کا خط سامنے آگیا

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) گزشتہ روز"ایک قوم، ایک نصاب، پنجاب سے آغاز"، سوشل میڈیا پر ٹاپ ٹرینڈ بنا رہا،وزیراعلیٰ پنجاب کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان کے وژن اور پاکستان تحریک انصاف کے منشور کے مطابق آج سے پنجاب بھر میں یکساں نصاب کا آغاز کردیا گیا ہے جس کے تحت صوبے میں تمام سرکاری اور نجی سکولوں میں پرائمری تک یکساں نصاب نافذ کردیا گیا ہے۔تاہم سوشل میڈ یا پر اس بارے میں ایچیسن کالج کے پرنسپل مائیکل تھامس کا خط سامنے آیا ہے جس میں یکساں نصاب کے حوالے سے تشویش کا اظہار کیا گیا ہے ۔مائیکر و بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر اینکر پرسن ثنا بچہ نے ایچیسن کالج کے پرنسپل کا ایک خط شیئر کیا اور کہا کہ ہمارے مغرب شناس وزیراعظم، محمود اور ایاز کو سمجھا بجھا کر ایک صف میں کھڑا کرنے ہی والے تھے کہ محمود کا پرنسپل بول پڑا۔۔۔کہ فوٹو کی حد تک تو ٹھیک ہے لیکن ایاز والی پارٹی، اپنے حجرے تک ہی محدود رہے تو بہتر ہے۔ 

مائیکل تھامس کی جانب سے خط میں لکھا ہوا تھا کہ میں یکساں نصاب کے اثرات سے متعلق والدین کی پریشانی سے با خبر ہوں ،میرا مشورہ ہے کہ اس عمل کو سرکاری سطح پر چلا یا جائے ۔ان کا کہنا تھا کہ ایچیسن نے اپنا موقف واضح کردیا ہے اور ایسا مناسب طریقے سے کرتے رہیں گے۔ہم بخوشی تعلیم کے اس کردار کی سپورٹ کرتے رہیں گے جس سے بچوں کی زندگیوں ترقی ہو اور ان کی قومی سطح پرمستقبل میں کامیابی کا امکان ہو۔

یاد رہے کہ" سنگل نیشنل کریکولم" پورے پاکستان میں نافذ کیا جائے گا جس سے تعلیمی شعبے میں طبقاتی تقسیم کا خاتمہ ہو گا، صوبہ پنجاب SNC پر عملدرآمد کروانے والا پہلا صوبہ بن گیا ہے۔

مزید :

قومی -