میرل سٹریپ نے نئی فلم میں حقیقت کا رنگ بھرنے کیلئے اپنی صحت داﺅ پر لگا دی

میرل سٹریپ نے نئی فلم میں حقیقت کا رنگ بھرنے کیلئے اپنی صحت داﺅ پر لگا دی

  

لاس اینجلس(اے پی پی) ہالی وڈ کی منجھی ہوئی اداکارہ میرل سٹریپ نے اپنی نئی فلم اگست اوسیج کاونٹی میں اپنے کردار میں حقیقت کا رنگ بھرنے کیلئے اپنی صحت داﺅ پر لگا دی ۔ آسکر ایوارڈ یا فتہ میرل سٹریپ جن کی عمر 64برس ہے نے فلم کیلئے حقیقی طور پر سگریٹ اور شراب نوشی کرنی شروع کر دی ۔ جو ان کے بقول اس فلم کے کریکٹر کی ڈیمانڈ ہے جو ان کا کریکٹرذہنی دباﺅ میں آکر شروع کرتا ہے جن میںسگریٹ کے ساتھ شراب نوشی بھی ہے ۔ اس فلم میں ان کا کرداروائلٹ ویسٹن کا ہے جس کا خاندان مالی بد حالی کاشکار ہو جاتا ہے ۔ اس فلم کی دیگر کاسٹ میں جولیا رابرٹس ، ایون میک گریگور اور بنیڈٹ کمبرز بیچ شامل ہیں۔مذکورہ فلم پچیس دسمبر کو ریلیز کی جائے گی۔

مزید :

کلچر -