خواجہ فرید ہسپتال کے ڈاکٹر پر مسلح افراد کا تشدد،وزیر محنت نے نوٹس لے لیا

خواجہ فرید ہسپتال کے ڈاکٹر پر مسلح افراد کا تشدد،وزیر محنت نے نوٹس لے لیا

لاہور(سٹی رپورٹر) صوبائی وزیر محنت وانسانی وسائل انصر مجید خان نے خواجہ فرید سوشل سیکورٹی ہسپتال ملتان کے سنیئر میڈیکل آفیسر ڈاکٹر کاشف جاوید پر ایک فیکٹری ملازم عبدالغفار اعوان اور اس کے مسلح ساتھیوں کے مبینہ تشدد کا نوٹس لے لیاہے ۔ وزیر محنت انصر مجید خان کی ہدایت پر میڈیکل سپرنٹنڈنٹ خواجہ فرید سوشل سیکورٹی ہسپتال ملتان ڈاکٹر محمد طارق شیخ نے معاملے کی تحقیقات کے لئے تین رکنی کمیٹی تشکیل دے دی ہے۔ کمیٹی میڈیکل آفیسر ڈاکٹر کاشف جاوید کو ہراساں کرنے اور انہیں تشدد کا نشانہ بنانے کے واقعہ کی مکمل اور غیر جانبدارانہ تحقیقات کرکے 24 گھنٹے میں رپورٹ پیش کرے گی

۔تفصیلات کے مطابق عبدالغفار اعوان نامی شخص جو ملتان کی ایک معروف فیکٹری کا ملازم ہے گذشتہ روز اپنے چھ مسلح افراد کے ہمراہ ہسپتال ہذاآیا اور ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹر کاشف جاویدپر شدید تشدد کیا ۔ اس حوالے سے تھانہ ممتاز آباد ملتان میں عبدالغفار اعوان اور اس کے نامعلوم ساتھیو ں کے خلاف ایف آئی آر بھی درج کروائی جاچکی ہے ۔ وزیر محنت انصر مجید خان نے کہاکہ معاشرے کے انتہائی کم وسیلہ مزدور طبقے کو صحت کی سہولیات فراہم کرنے والے ڈاکٹروں اور متعلقہ سٹاف کو غنڈہ عناصر سے بہر صورت تحفظ فراہم کیاجائے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1