یورپ میں ہنر مند افراد کی قلت سے فائدہ اٹھایا جائے: خواجہ حبیب

یورپ میں ہنر مند افراد کی قلت سے فائدہ اٹھایا جائے: خواجہ حبیب

لاہور( آن لائن)ایران پاک فیڈریشن آف کلچر اینڈ ٹریڈ کے صدر خواجہ حبیب الرحمان نے کہا ہے کہ بر یگزٹ کے بعد پاکستانیوں پر یورپ میں2 لاکھ نوکریوں کے دروازے کھل گئے ہیں،چین اور بھارت متحرک ہو چکے،حکومت پاکستان ابھی تک بیدار نہیں ہوئی، بر یگزٹ کے بعد بر طانیہ اور یورپ میں ہنر مند اور غیر ہنر مند افراد کی جوقلت پیدا ہونے جا رہی ہے اس سے فائدہ اٹھانے کیلئے حکومت کو قبل از قت اقدامات کر نا ہوں گے، دیگر شعبوں کے علاوہ بر طانیہ کو نیشنل ہیلتھ سروسز کو بھی تیس ہزار نرسوں کی کمی کاسامنا ہے،اس طرح یورپی ڈاکٹرز بھی بر طانیہ چھوڑ کر جا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وزارت اوورسیز کو چاہیے کہ وہ پاکستانی ڈاکٹروں، دواسازوں،نرسوں، انجینئرز، ڈرائیوروں ، جونیئر شیف، آ ئی ٹی سے منسلک نوجوانوں اور دیگر شعبوں کے ہنر مندوں کو بر طانیہ اور دیگر یورپی ممالک میں بھیجنے کیلئے فوری اقدامات کرے۔اس کیلئے پا کستان کو یورپی ممالک میں تعینات سفارتحانوں میں تعینات اپنے کمرشل اور سوشل اتاشیوں کے ذریعے مختلف کمپنیوں اور سر کاری اداروں سے تعلقات بہتر کر نا ہوں گے۔

جبکہ ایف پی سی سی آ ئی اور دیگر تاجر تنظمیں بھی اہم کرادار ادا کر سکتی ہیں لیکن افسوس کی بات کی حکومت نے اس سلسلے میں تاحال کوئی کردار ادا نہیں کیا، حکومت پا کستانی بر یگزٹ کی سیاسی صورتحال پر تو نظر ہے لیکن اسکے نتیجے میں پیدا ہونے والے مواقع پر نظر نہیں۔

مزید : کامرس