ٹریڈ لائسنس فیس میں اضافہ کسی صورت قبول نہیں‘ طاہر عباسی

   ٹریڈ لائسنس فیس میں اضافہ کسی صورت قبول نہیں‘ طاہر عباسی

  



اسلام آباد (کامرس ڈیسک) اخباری اطلاعات کے مطابق تاجروں کیلئے ٹریڈ لائسنس فیس میں تین سو فیصدتک اضافہ کیا جا رہا ہے جو تاجر برادری کیلئے کسی بھی صورت میں قابل قبول نہیں ہو گا لہذا سی ڈی اے اور میٹروپولیٹن کارپوریشن اسلام آباد (ایم سی آئی) تاجروں کو مزید مسائل سے بچانے کیلئے ایسے کسی بھی اقدام سے گریز کریں۔ ان خیالات کا اظہار اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے قائم مقام صدر طاہر عباسی نے چیمبر کے دورہ کے موقع پر تاجر نمائندوں کے ایک وفد سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ گذشتہ دنوں ایم سی آئی نے پراپرٹی ٹیکس میں تین سو فیصد اضافہ کر دیا تھا جس پر اسلام آباد ہائی کورٹ نے حکم امتناعی دیا ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ قبرستان کی فیس اور بورڈ ٹیکس میں بھی اضافہ کر دیا گیا ہے جو کے سراسر زیادتی ہے لہذا انہوں نے مطالبہ کیا کہ ان پر نظرثانی کی جائے۔اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے نائب صدر سیف الرحمٰن خان نے کہا کہ ایم سی آئی کے فنڈز کی کمی نہیں ہے لیکن  معلوم نہیں کہاں خرچ ہو رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ چار برسوں میں کسی بھی مارکیٹ میں کوئی ترقیاتی کام نہیں ہوا جس وجہ سے مارکیٹیں کھنڈرات بنتی جا رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سی ڈی اے اور ایم سی آئی میں سے کوئی ذمہ داری نہیں لے رہا جبکہ ان کی باہمی لڑائی سے تاجر برادری اور شہری خوار ہو رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مارکیٹوں میں سٹریٹ لائٹس کام نہیں کر رہی ہیں جبکہ فٹ پاتھ ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہیں۔ انہوں نے کہا کہ صفائی اور سیوریج کا نظام بھی خراب ہے جس وجہ سے مارکیٹوں میں گندگی کے ڈھیر لگے ہوئے ہیں۔ انہوں نے میئر اسلام آباد شیخ عنصر عزیز سے اپیل کی کہ وہ مارکیٹوں میں ترقیاتی کاموں کی طرف فوری توجہ دیں اور اس کیلئے فنڈز مختص کریں۔ 

 اس موقع پر سابق ایگزیکٹو ممبر زاہد حمید نے کہا کہ کاروباری حالات سازگار نہیں ہیں لہذا ایسی صورت میں جناح سپر مارکیٹ میں پارکنگ فیس کا اطلاق نہیں ہونا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ اس سے قبل ڈی ایم اے پارکنگ فیس لگانے کی کوشش کر چکا ہے جو تاجروں کو کسی بھی صورت میں منظور نہیں۔  

مزید : کامرس