نواز شریف کے دماغ کی شریان کی سرجری ہوگی یا سٹنٹ ڈالا جائیگا

نواز شریف کے دماغ کی شریان کی سرجری ہوگی یا سٹنٹ ڈالا جائیگا

  



لندن (آئی این پی) سابق وزیراعظم نواز شریف کاگزشتہ روز لندن کے گائز ہسپتال میں دل کے سرجن اور گردوں کے امراض کے ماہر ڈاکٹرز نے نواز شریف کا معائنہ کیا۔ ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان نے بتایا ہے کہ پی ای ٹی سکین میں ایک سے زیادہ لیمف نوڈز پائے گئے ہیں۔ رائٹ ایگزیلیری لیمف نوڈز کا مزید معائنہ بھی کیا گیا۔ پیر کوڈاکٹر عدنان کا میڈیا سے گفتگو میں کہنا تھا کہ مزید ٹیسٹ کے بعد پتا چلے گا کہ لیمف نوڈز کی وجہ کیا ہے؟ انہوں نے بتایا کہ نواز شریف کے پلیٹ لیٹسکوادویات کے ذریعے خاص لیول پر رکھا جا رہا ہے۔انہوں نے بتایا کہ نواز شریف کے مرض کی مزید تحقیقات اور ریگولر فالو اپ جاری ہے، جس میں خون کے ٹیسٹ بھی شامل ہیں۔ ڈاکٹر عدنان نے طبی اصلاحات کا استعمال کرتے ہوئے کہا کہ سابق وزیراعظم کے رائٹ ایگزیلا میں نوڈز ہیں جو بڑے ہو چکے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ لاہور میں نوازشریف کو ہارٹ اٹیک ہوا تھا۔ اس لیے کارڈیالوجی کی ایک ٹیم بھی ان کا معائنہ کر رہی ہے۔ انجیو گرام اور انجیو پلاسٹی کیا جائے گا جبکہ دماغ کو خون منتقل کرنے والی شریان کے علاج کیلئے ویسکولر سرجن کی خدمات لی ہیں۔ ویسکولر سرجن دوبارہ نواز شریف کو معائنہ کریں گے۔ دماغ کی شریان کی سرجری یا سٹنٹ ڈالا جائے گا۔

مزید : صفحہ اول