ہواوے مقابلے،پاکستان کی دوسری اور تیسری پوزیشن

  ہواوے مقابلے،پاکستان کی دوسری اور تیسری پوزیشن

  



لاہور(پ ر) پاکستان سے دو ٹیموں سمیت،پورے مشرق وسطیٰ سے 39 طلبہ پر مشتمل 13 ٹیموں نے ہواوے مڈل ایسٹ ICT مقابلہ2019-2020 کے فائنل میں حصہ لیا۔یہ مقابلہ آج ہواوے کے گلوبل ہیڈ کوارٹرز شین ژین میں ہوا۔2019 کے مقابلے میں بحرین، عراق، اردن، کویت،لبنان، اومان،پاکستان، قطر،سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کی437 یونیورسٹیوں اور کالجوں کے 21,000 طلبہ نے رجسٹریشن کرایا تھا۔اس سال فائنل میں 13 ٹیموں نے حصہ لیا۔مقابلے میں پاکستان کی ٹیم1 دوسرے اور ٹیم2 تیسرے نمبر پر رہی۔جیتنے والی ٹیموں کو خصوصی سرٹیفکیٹس اور ٹرافیاں دی گئیں،انھیں ہواوے کے گلوبل ہیڈ کوارٹرز میں اس کی خصوصی Labs اور ریسرچ سینٹرزمیں تجربے کا موقع بھی دیا گیاجہاں انھیں اس انڈسٹری کے روشن ترین دماغوں کا تعاون حاصل ہو گا۔پاکستان کی ٹیم1 میں محمد عمر، نیرج ہریجن اور حسیب مہدی شامل تھے جبکہ محمد سلمان، سید قاضی شمیل الدین اور سید محمد کاظمین دوسری ٹیم کا حصہ تھے۔جیتنے والی ٹیموں کو تین ماہ کی کوالیفائنگ مدت کے دوران منتخب کیا گیا جس میں ہر ٹیم نے ریجنل فائنل میں اپنی جگہ بنانے کے لیے دوسری ٹیم کا مقابلہ کیا۔کوالیفائنگ راؤنڈ میں اصل ICT لیبارٹریز میں کام اور کلاؤڈ، کمپیوٹنگ، مصنوعی ذہانت،بِگ ڈیٹا اور5G جیسی اہم ٹیکنالوجیزکے اپ ڈیٹ لینا شامل تھا۔فائنل راؤنڈ میں ٹیموں نے دن بھر ایک دوسرے کا مقابلہ کیا جس میں گلوبلICT ماہرین کے ساتھ ٹیکنالوجی ورکشاپس اور ہواوے کے سینئر مندوبین سے بات چیت شامل تھی۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی