پسماندہ علاقوں کو ترقی یافتہ بنانے میں کسر نہیں چھوڑی جائیگی،شہریار آفریدی

پسماندہ علاقوں کو ترقی یافتہ بنانے میں کسر نہیں چھوڑی جائیگی،شہریار آفریدی

  



پشاور(سٹاف رپورٹر) وزیراعظم عمران خان اورو وزیراعلی محمود خان کا شکرگزار ہوں جنہوں نے جنوبی اضلاع کیلئے پشاور تا ڈی آئی خان موٹروے جیسابڑا ترقیاتی منصوبہ منظور کیا، جنوبی اضلاع کو ماضی میں ترقیاتی کاموں سے محروم رکھا گیا، یہ پی ٹی آئی حکومت ہی ہے جو پسماندہ علاقوں کو ایسے ہی ترقیاتی سکیموں کے ذریعے قومی دھارے میں لارہی ہے، ان خیالات کا اظہاروفاقی وزیر برائے انسداد منشیات شہر یارخان آفریدی اور ترجمان پختونخوا حکومت اجمل خان وزیر نے محکمہ اطلاعات خیبرپختونخوا کے اطلاع سیل میں منعقدہ پریس کانفرنس کے دوران کیا۔ اس موقع پر وزیرصحت ہشام انعام اللہ، ایم پی اے نصیراللہ وزیر، شاہ محمد وزیر، پختونیار خان سمیت جنوبی اضلاع سے منتخب دیگر ممبران صوبائی و قومی اسمبلی موجود تھے۔ وفاقی وزیر برائے انسداد منشیات شہر یار خان آفریدی نے مزید کہا کہ سی پیک کے مغربی روٹ سے جڑے ترقیاتی منصوبوں پر کام کو پچھلے دور میں پی ٹی آئی حکومت نے یقینی بنایا تھا اور اب مغربی روٹ سے جڑے ان تمام  ترقیاتی منصوبوں پر کام جاری ہے۔منصوبے کی تفصیلات بتاتے ہوئے وزیراعلٰی کے مشیر برائے قبائلی اضلاع و ترجمان پختونخوا حکومت اجمل خان وزیر کا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان کی زیر صدارت پشاور سے ڈی آئی خان موٹروے کی الائنمنٹ کے حوالے سے اہم اجلاس منعقدا ہوا جس میں جنوبی اضلاع سے اراکین قومی و صوبائی اسمبلی نے اجلاس میں شرکت کی جس میں مذکورہ بالا موٹروے کی اصولی منظوری دی گئی۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ مجوزہ موٹروے کی الائنمنٹ کیلئے پانچ مختلف آپشنز تجویز کئے گئے۔ مجوزہ موٹروے پشاور(چمکنی) سے درہ آدم خیل، وہاں سے ہنگو اور پھر ہنگو سے بانڈہ داؤد شاہ، کرک، کڑپا، ڈومیل، بنوں، سرائے نورنگ، لکی مروت، ٹانک، کلاچی سے ہوتا ہوا ڈیرہ اسماعیل خان کے قریشی چوک تک تعمیر کیا جائے گا۔ اجمل خان وزیر کا یہ بھی کہنا تھا کہ یہ الائنمنٹ تقریباً 339 کلومیٹر طویل ہے اور 15 سے زائد انٹر چینجز پر مشتمل ہوگا۔ انٹر چینجز کے ذریعے آبادی والے علاقوں سمیت ترقی سے محروم تمام علاقوں کو رسائی دی جارہی ہے اور یہ کہ یہ موٹروے جنوبی اضلاع کیلئے ایک بڑا منصوبہ ہے، جس سے جنوبی اضلاع ترقی کی راہ پر گامزن ہونگے۔ انٹرچینجز سے متعلق ترجمان پختونخوا حکومت کا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ کی متعلقہ عوامی نمائندوں کی مشاورت سے انٹرچینجزکے تعین کاحتمی پلان تشکیل دیا جائے گا۔ جنوبی اضلاع کی ترقی سے محروم علاقوں کو اْٹھانا حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے۔ اجمل خان وزیر کا مزید کہنا تھا کہ اربو ں روپے کی لاگت سے پشاور سے ڈی آئی خان موٹروے کی تکمیل جنوبی اضلاع کی تقدیر بدل دے گی، بہترین مواصلاتی نیٹ ورک کے ذریعے صوبے کے تمام ریجنز کو باہم مربوط کیا جارہا ہے۔

شہریار آفریدی

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر