ایبٹ آباد میں قتل کے 5 ملزمان 48 گھنٹوں میں گرفتار

  ایبٹ آباد میں قتل کے 5 ملزمان 48 گھنٹوں میں گرفتار

  



ایبٹ آباد(ڈسٹرکٹ رپورٹر)تھانہ حویلیاں پولیس نے ڈی ایس پی شمریز خان کی نگرانی میں قتل کے پانچ ملزمان کو 48 گھنٹوں میں گرفتار کرکے پابند سلاسل کر دیا تفصیلات کے مطابق ایک ہفتہ قبل تھانہ حویلیاں کی حدود چونگی نمبر 4 کے قریب دو گروپوں میں تصادم کے نتیجہ میں دو سگے بھائی ثاقب دلدار اور قاسم دلدار فائرنگ سے جانبحق ہو گئے تھے جس کی دعویداری مقتولین کے والد دلدار نے پانچ افراد پر کی جو کہ مقتولین کے رشتہ دار بھی ہیں جن کی گرفتاری کے لئے ڈی پی او ایبٹ آباد جاوید اقبال نے مقامی ڈی ایس پی شمریز خان اور ایس ایچ او سردار رفیق کو قاتلوں کی گرفتاری کے خصوصی اسکواڈ دیا گزشتہ رات مقامی پولیس نے ڈی ایس پی شمریز خان کے ہمراہ مخبر کی اطلاع پر قریبی علاقے میں سرچ آپریشن کیا جس کے نتیجہ میں لپولیس نے پانچ ملزمان ناصر ولد ولی احمد،اویس ولد ریاض،بلال ولد روایت،باسط ولد شفاقت، روایت ولد ولی احمد، نیاز ولد ولی احمد کو گرفتار کر کے چالان عدالت میں پیش کردیا اس موقع پر ڈی ایس پی شمریز خان نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ حویلیاں قتل کیس میں نامزد ملزمان کی گرفتاری حویلیاں پولیس کے لئے چیلنج تھی جس کو تھانہ حویلیاں نے اپنے بہادر جوانوں کے ساتھ کاروائی کرتے ہوئے دو دن میں مکمل کرتے ہوئے کامیابی حاصل کی انہوں نے کہا کہ جرائم کے خاتمے کے لئے میڈیا اور سول سوسائٹی کا تعاون ضروری ہے

مزید : پشاورصفحہ آخر