دہشتگردی کیخلاف جنگ میں پولیس نے لازوال قربانیاں رقم کی ہیں: ڈی آئی جی مردان

دہشتگردی کیخلاف جنگ میں پولیس نے لازوال قربانیاں رقم کی ہیں: ڈی آئی جی مردان

  



مردان(بیورورپورٹ) ڈی آئی جی مردان ریجن شیراکبر خان نے کہاہے کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پولیس نے لازوال قربانیاں رقم کی ہیں،جرائم کی بیخ کنی،امن امان کی بحالی اورمظلوموں کوریلیف دینا اولین ترجیحات میں شامل ہیں،منشیات فروشی،لینڈ مافیا اورسود خوروں سے آہنی ہاتھ سے نمٹاجائے گا،تھانوں پر شہریوں کا اعتماد بحال کرنے کے لئے تمام وسائل بروئے کارلائیں گے،پولیس تبادلے اور تعیناتیاں میرٹ پر ہونگیں،جزا اور سزا کا عمل جاری رہے گاوہ تعنیاتی کے بعد پولیس دربارسے خطاب اور میڈیا سے گفتگو کررہے تھے ڈی پی او سجادخان،ایس پی اپریشن مشتاق احمد خان سمیت دیگر آفیسران بھی موجود تھے پولیس لائنز پہنچے پرپولیس کے چاق و چوبند دستے نے انہیں سلامی پیش کی ڈی آئی جی نے یاد گار شہدائے پر پھول چڑھائے اور فاتحہ خوانی کی میڈیا سے گفتگو کے دوران ڈی آئی جی نے کہاکہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پولیس کے سپاہی رینک سے ایڈیشنل آئی جی رینک تک 1700جوانوں نے جانوں کے نذرانے دیئے اوراس سے بڑی تعداد زخمیوں کی ہے جو امن کی بقاء کے لئے لڑے ہیں انہوں نے کہاکہ پولیس فورس کو اپنے شہیدوں اور غازیوں پر فخر ہے اوران شہادتوں کا تقاضاہے کہ پولیس اہلکار اپنی ڈیوٹی ایمانداری سے اداکریں پولیس اپنی پیشہ ورانہ ذمہ داریاں پوری دیانت داری سے نبھائیں ان کے جائز مسائل او رمشکلات حل کئے جائیں گے پولیس میں کالی بھیڑیوں کو برداشت نہیں کیاجائے گا انہوں نے کہاکہ امن امان کی بحالی کے لئے مردان میں جلد سیف سٹی پراجیکٹ کا آغازہوگا انہوں نے کہاکہ کسی کو اسلحے کی نمائش کی اجازت نہیں دی جائے گی سماج دشمن عناصر سے آہنی ہاتھ سے نمٹاجائے گا جبکہ شریف شہریوں کو تھانوں میں عزت دی جائے گی۔ پولیس دربار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مردان پولیس نے قیام امن کیلئے بے مثال قربانیاں دی ہیں میں مردان کے عظیم شہداء اور غازیوں کو سلام پیش کرتا ہوں،پولیس فورس اپنی ڈیوٹی ایماندارری اور جانفشانی سے سر انجام دیں۔انہوں نے اہلکاروں کو ہدایت کی کہ تھانوں، چوکیوں اور دفاترمیں آنے والے سائلین کے ساتھ خوش اسلوبی سے پیش آئیں اور اپنی ڈیوٹی پیشہ ورانہ طریقے سے سر انجام دیں۔دربار کے اختتام پر ڈی آئی جی مردان نے پولیس اہلکاروں کو درپیش مسائل اور تجاویز سنیں اور ان کے فوری حل کیلئے احکامات جاری کئے۔ انہوں نے کہاکہ پولیس کے جائز مسائل اور تجاویز کیلئے میرے دفتر کے دروازے ہمیشہ کھلے رہیں گے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر