بابراعظم نے آسٹریلیا میں اپنی کامیابی کا راز بتا دیا

بابراعظم نے آسٹریلیا میں اپنی کامیابی کا راز بتا دیا
بابراعظم نے آسٹریلیا میں اپنی کامیابی کا راز بتا دیا

  



ایڈیلیڈ (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے بیٹسمین بابراعظم کا کہنا ہے کہ انہوں نے ماضی کی غلطیوں پر محنت سے قابو پائی جس کے باعث حالیہ دورہ آسٹریلیا میں کامیابی ملی۔

تفصیلات کے مطابق 2016ءکا دورہ آسٹریلیا بابراعظم کیلئے خاصہ برا رہا تھا جس میں وہ 11.33 کی اوسط کیساتھ صرف 68 رنز ہی بنا سکے تھے مگر حالیہ دورہ آسٹریلیا میں انہوں نے عمدہ کارکردگی دکھائی اور 52.50 کی اوسط کیساتھ ایک سنچری کی مدد سے 210 رنز بنائے۔

کرکٹ آسٹریلیا کی ویب سائٹ کو دئیے گئے انٹرویو میں بابراعظم نے کہا کہ ”تین سال قبل، مجھے زیادہ تجربہ نہیں تھا جو آپ کو بین الاقوامی سطح پر کھیل کر ہی حاصل ہوتا ہے۔ آپ ناصرف حریفوں پر بلے خود پر بھی نظر رکھتے ہیں، ماضی میں کی گئی اپنی غلطیاں یاد تھیں اور میں نے ان پر بہت کام کیا۔“

بابراعظم نے اعتراف کیا کہ آسٹریلیا کے باﺅلنگ اٹیک کا سامنا پوری سیریز میں ہی ایک مشکل چیلنج تھا۔ انہوں نے کہا ” آسٹریلیا میں سکور کرنے پر جو اعتماد حاور خوشی ملتی ہے وہ شائد کہیں اور نہیں ملتی۔ آسٹریلین ٹیم کا باﺅلنگ اٹیک شاندار ہے، اگر آپ مچل سٹارک، پیٹ کومنز اور جوش ہیزل ووڈ جیسے باﺅلرز کیخلاف رنز بنائیں تو یقینا بہت اعتماد ملتا ہے، اس کیلئے آپ کو بہت سے لمحات سے گزرتا پڑتا ہے جس سے آپ صبر کیساتھ رنز بنانا سیکھتے ہیں۔“

مزید : کھیل