چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ کو بڑی خوشخبری مل گئی، والد بن گئے

چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ کو بڑی خوشخبری مل گئی، والد بن گئے
چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ کو بڑی خوشخبری مل گئی، والد بن گئے

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس سردار محمد شمیم خان ریٹائرمنٹ سے کچھ عرصہ قبل بیٹے کے والد بن گئے۔

اینکر پرسن نجم ولی خان نے اس حوالے سے اپنی فیس بک پر لکھا کہ ’چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ جسٹس سردار شمیم ریٹائرمنٹ سے محض ستائیس دن پہلے، باسٹھ برس کی عمر میں، باپ بن گئے۔ سردار صاحب کی اس سے پہلے کوئی اولاد نہیں تھی۔ انہوں نے کچھ عرصہ پہلے دوسری شادی کی تھی اور اللہ تعالیٰ نے انہیں بیٹے سے نوازا ہے۔سردار صاحب کو بہت بہت مبارکباد۔‘

اس حوالے سے ملتان سے تعلق رکھنے والے ایک صحافی نے سوشل میڈیا پر ویڈیو بھی جاری کی ہے جس میں انہوں نے بتایا ہے کہ جسٹس سردار شمیم خان 62 برس کی عمر میں بیٹے کے باپ بنے ہیں۔صحافی کے مطابق ملتان ہائیکورٹ بار میں کچھ روز پہلے ایک تقریب جاری تھی جس میں چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ اور چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ سمیت ججز اور وکلا بھی موجود تھے۔

اسی تقریب میں ملتان ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر ملک حیدر عثمان نے ڈائس پر آکر چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ کے والد بننے کی خبر سنائی۔ اس موقع پر چیف جسٹس سمیت وکلا اور ججز نے انہیں تالیاں بجا کر مبارکباد دی ۔

جسٹس سردار شمیم ضلع رحیم یار خان کی تحصیل لیاقت پور کے علاقے ترنڈہ محمد پناہ سے تعلق رکھتے ہیں، وہ 62 برس کی عمر میں 31 دسمبر 2019 کو اپنے عہدے سے ریٹائر ہوں گے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور