بھنگ اور گانجا منشیات نہیں،اقوام متحدہ کے نیا اعلان سامنے آگیا

بھنگ اور گانجا منشیات نہیں،اقوام متحدہ کے نیا اعلان سامنے آگیا
بھنگ اور گانجا منشیات نہیں،اقوام متحدہ کے نیا اعلان سامنے آگیا

  

نیویارک(ڈیلی پاکستان آن لائن)قوام متحدہ میں انسداد منشیات سے متعلق ادارے نے بھنگ اور گانجے کو زیادہ سخت کنٹرول والی منشیات کی فہرست سے باہر کردیا۔ سما نیوز کے مطابق اقوام متحدہ میں نارکوٹیک ڈرگس کے ارکان کی اکثریت نے1961 کے شیڈول چہارم سے اسے ہٹانے کے حق میں ووٹ دیا۔اس کے حق میں 27 ممالک نے ووٹ دیا اور 25 ارکان نے اس کی مخالفت میں ووٹ دیا جبکہ ایک ملک نے ووٹنگ میں حصہ نہیں لیا۔ابھی تک گانجا اور بھنگ ہیروئین اور افیون جیسی سخت اور خطرناک قسم کی منشیات کی فہرست میں شامل تھیں۔تاہم عالمی ادارہ صحت نے بھنگ کے طبی استعمال پر تحقیق کو آسان بنانے کی سفارش کی تھی اور اسی پس منظر میں اس پر ووٹنگ کرائی گئی ہے۔عالمی ادارہ صحت کا کہنا تھا کہ بھنگ پر کنٹرول کو آسان کرنے کی ضرورت ہے تاکہ طبی طور پر استعمال کے اس کے فوائد پر تحقیق کو آسان بنایا جاسکے جبکہ پہلے گانجے اور بھنگ کو بھی ہیروئین اور افیون جیسی خطرناک منشیات کے زمرے میں شامل کیا گیا تھا۔اقوام متحدہ کے کمیشن نے بھنگ اور گانجے کو ہیروئین اور افیون جیسی خطرناک منشیات کی فہرست سے الگ کردیا ہے تاہم ابھی بھی قانونی طور پر اسے جائز نہیں ٹھہرایا گیا ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -